شفیق آباد میں اڑھائی سالہ بچی نالے میں جاگر ی ، ریسکیو حکام آپریشن ادھورا چھوڑ کر چلے گئے ، ورثاء نے آٹھ گھنٹے بعد لاش نکال لی

شفیق آباد میں اڑھائی سالہ بچی نالے میں جاگر ی ، ریسکیو حکام آپریشن ادھورا ...
شفیق آباد میں اڑھائی سالہ بچی نالے میں جاگر ی ، ریسکیو حکام آپریشن ادھورا چھوڑ کر چلے گئے ، ورثاء نے آٹھ گھنٹے بعد لاش نکال لی

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک )لاہور کے علاقے شفیق آباد میں اڑھائی سالہ بچی گندے نالے میں گرنے سے جاں بحق ہو گئی ۔

اے آر وائے نیوز کے مطابق لاہور کے علاقے شفیق آباد میں اڑھائی سالہ نور فاطمہ گندے نالے میں جا گری جس کے بعد مقامی افراد نے ریسکیو حکام کو اطلاع دی تاہم ریسکیو حکام نے رات کے وقت اندھیرے کا بہانہ بنا کر سرچ آپریشن کر نے سے معذرت کر لی  اورنالے کو کلیئر قرار دے کر واپس چلے گئے ۔

بچی کے ورثاءاور مقامی افرادنے ریسکیو حکام کی بے حسی کے بعد کرین کی مدد سے آٹھ گھنٹے بعد نور فاطمہ کی لاش اسی  نالے سے نکال لی ۔ورثاٗ ءکا کہنا ہے کہ بچی گزشتہ رات 6 بجے نالے میں گری جس کے بعدریسکیو کو بلایا گیا اور اگر ریسکیو آپریشن جاری رہتا تو بچی کو زندہ حالت میں بچایا جا سکتا تھا ۔ 

مزید :

لاہور -