حکومت عدالتوں میں فول پروف سیکیورٹی ، وکلاء کیلئے گرانٹ کی فراہمی کو یقینی بنائے ، وکلا ء کا مطالبہ

حکومت عدالتوں میں فول پروف سیکیورٹی ، وکلاء کیلئے گرانٹ کی فراہمی کو یقینی ...

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )پاکستان بار کونسل، پنجاب بار کونسل، لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن، لاہور بار ایسوسی ایشن اور ٹیکس بار ایسوسی ایشن، لاہور کے عہدیداران نے ایک مشترکہ ہنگامی اجلاس کے بعد حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وکلاء اور عدالتوں کو فول پروف سیکیورٹی فراہم کی جائے اور سالانہ بجٹ میں وکلاء کے لئے گرانٹ کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے ۔یہ اجلاس پنجاب بار کونسل میں منعقد ہوا جس میں بار کونسل اور بار ایسوسی ایشنوں کے عہدیداروں اور ممبران جن میں چودھری اشتیاق احمد خاں، طاہر نصراﷲ وڑائچ، میاں محمد شفیق بھنڈارہ،محمد مقصود بٹر ممبران پاکستان بار کونسل ، چوہدری محمد حسین وائس چیئرمین، پنجاب بار کونسل، جمیل اصغربھٹی ممبر پنجاب بار کونسل، رانا ضیاء عبدا لرحمن صد ر ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن، سردار طاہر شہباز خاں نائب صدر لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن و ارشد جہانگیر جھوجہ صدر لاہور بار ایسوسی،شاہد نواب چیمہ سیکرٹری لاہور بار ایسوسی ایشن، فرحان شہزاد، صدر لاہور ٹیکس بار ایسوسی ایشن، فاروق مجید نائب صدر و دیگر نے اجلاس میں شرکت کی۔اجلاس میں درجہ ذیل مطالبات کئے گئے۔دہشت گردی کے واقعات کو مدنظر رکھتے ہوئے حکومت پاکستان و حکومت پنجاب وکلاء کو فول پروف سیکورٹی فراہم کرے۔سالانہ بجٹ میں وکلاء کے لیے گرانٹ ان ایڈکو ہر صورت یقینی بنایا جائے۔گورنمنٹ کے ہسپتالوں میں وکلاء کو میڈیکل کی دی جانے والی سہولیتں ناکافی ہیں ۔وکلاء کو میڈیکل ریلیف بھی دیا جائے اور سرکاری آفیسر درجہ 17 کے برابر سہولیات فراہم کی جائیں۔اوکاڑہ میں پولیس کی طرف سے وکلاء کے ساتھ کی جانے والی پولیس گردی کو روکتے ہوئے ڈی پی او اوکاڑہ کو فی الفور تبدیل کیا جائے۔مقدمہ نمبر119/16 تھانہ سٹی سمندری مدعی محمد اعظم ایڈووکیٹ میں ملزمان کو فوری گرفتار کیا جائے۔

مزید :

علاقائی -