وفاقی محتسب نے سی ڈی اے میں غیر قانونی بھرتی 19 افسرفارغ کردئیے

وفاقی محتسب نے سی ڈی اے میں غیر قانونی بھرتی 19 افسرفارغ کردئیے

  

لاہور(سپیشل رپورٹر)وفاقی محتسب نے سی ڈی اے میں رشوت اور اقرباء پروری کی بنا پر بھرتی ہونے والے 19 افسران کی تعیناتی کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ ان افسران کو فوری ملازمتوں سے فارغ کر دیا جائے ۔ وفاقی محتسب نے آبزرویشن دی ہے کہ سی ڈی اے میں قانون کی حکمرانی کویقینی بنانے کے لئے انقلابی اقدامات اٹھانا وقت کی ضرورت ہے سی ڈی اے چیئرمین نے وفاقی محتسب کی ہدایت کی آڑ میں قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے درجنوں افسران بھرتی کئے ہیں بھرتی ہونے والوں میں عبدالرزاق ، روشن خان ، سید صفدر علی ، خضرحیات ستی ، نعیم اکبر ڈار ، رمضان ساجد ، سید حسن رضا ، فیاض احمد ، عبدالحکیم ، اظہر خورشید ، محمد عطاء اللہ ، اسد عباس ، محمد کاشف ، تیموراحمد ، کامران بخت ، غلام شبیر ، عبدالرؤف خان ، عارف محمود احمد اور امتیاز علی شار شامل ہیں ۔ ان میں ایسے آفسران بھی ہیں جو بی اے تھرڈ ڈویژن قابلیت رکھتے ہیں رپورٹ کے مطابق سی ڈی اے چیئرمین نے راجہ الطاف حسین کو ریٹائرمنٹ کے بعد بھاری پیکیج پر دوبارہ بھرتی کیا ہے ۔ شبیر حسین کو بھی گریڈ 15 میں ترقی دے دی گئی ہے ۔

مزید :

صفحہ آخر -