سنسربورڈنے ملک بھر میں فلم ’’مالک‘‘کی نمائش پر پابندی عائدکردی

سنسربورڈنے ملک بھر میں فلم ’’مالک‘‘کی نمائش پر پابندی عائدکردی

  

لاہور(فلم رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی سنسربورڈکی ہدایات پر ملک بھرمیں زیرنمائش فلم’’مالک‘‘کی نمائش پر فوری طورپر پابندی عائدکردی ہے جس کے بعد تمام سینماگھروں کو ہدایات جاری کردی گئیں ہیں کہ فلم کی نمائش روک دی جائے۔ ماضی میں پی ٹی وی کی ڈرامہ سیریل ’’دھواں‘‘سے شہرت حاصل کرنے والے ڈائریکٹر واداکارعاشر عظیم نے آئی ایس پی آر کے تعاون سے یہ فلم بنائی تھی جس میں ملک میں جاری دہشت گردی اور اس کے خلاف ہونے والے والی کارروائیوں کو موضوع بنایا گیا تھا تاہم گزشتہ روز فلم کی نمائش پر پابندی عائدکردی گئی۔دوسری جانب نجی نیوز چینل دنیا نیوز کے مطابق وزارت اطلاعات ذرائع کا کہنا ہے کہ فلم میں بہت زیادہ دہشت گردی اور کرپشن دکھائی گئی ہے جس سے دنیا بھر میں ہمارے ملک کا منفی امیج بنے گا۔دوسری جانب فلم کے ڈائر یکٹر اور رائٹر اشعر عظیم کا کہنا ہے کہ سیاست دانوں کو سچائی پسند نہیں آئی اس لیے اس فلم پر پابندی لگا دی ہے۔’’مالک ‘‘فلم کے رائٹر و ڈائریکٹر عاشر عظیم نے کہا ہے کہ فلموں میں آئٹم سونگز پر حکومت کو کوئی اعتراض نہیں ہوتا،ہم نے وڈیروں کے ظلم و ستم کی بات کی تو فلم پر پابندی لگا دی گئی۔ڈان نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے حکومت کی جانب سے پابندی کا شکار فلم ’’مالک ‘‘ کے رائٹر اور ڈائر یکٹر عاشر عظیم کا کہنا تھا کہ فلم میں کسی صوبے یا خاص طبقے کو نشانہ نہیں بنایا گیا،انہوں نے فلم میں زمینداروں کے رویوں اور انکے ظلم و ستم کو دکھانے کی کوشش کی ہے۔جو لوگ فلم پر تبصرہ کر رہے ہیں انہوں نے فلم دیکھی ہی نہیں۔اگر فلم میں کوئی قابل اعتراض چیز ہوتی تو سنسر بورڈ پہلے ہی اس کی نمائش کی اجازت نہ دیتا۔عاشر عظیم کا مزید کہنا تھا کہ انہوں نے یہ فلم پاکستان کو متحد کرنے کے لیے بنائی ہے،فلم کی تیاری میں آئی ایس پی آر نے غیر معمولی تعاون نہیں کیا۔واضح رہے کہ اشعر عظیم نے معروف ڈرامے ’’دھواں ‘‘میں مرکزی کردار ادا کرتے ہوئے اپنے فنی کیر ئیر کا آغاز کیا تھا جسے لوگوں نے بہت زیادہ پسند کیا تھا۔

مزید :

صفحہ اول -