کوہاٹ میں مشترکہ سرچ آپریشن 36 مشتبہ گرفتار

کوہاٹ میں مشترکہ سرچ آپریشن 36 مشتبہ گرفتار

  

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) کوہاٹ یونیورسٹی کے اطراف میں پولیس اور سیکیورٹی فورسز کے مشترکہ سرچ آپریشن کے دوران 36مشتبہ افراد کو گرفتار کرلیا گیا۔کاروائی میں ناجائز اسلحہ بھی برآمدکرکے قبضے میں لیا گیاہے۔چار گھنٹے تک جاری رہنے والی مشترکہ چھاپہ مار کاروائیوں میں جامعہ کے اطراف میں واقع مختلف دیہاتوں میں درجنوں گھروں کی تلاشی لی گئی ۔پولیس ذرائع کے مطابق کوہاٹ میں مشتبہ دہشتگردوں اور جرائم پیشہ افراد کے خلاف جاری سرچ اینڈ سٹرائیک آپریشن کے سلسلے میں جرما کے علاقے میں واقع کوہاٹ یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے اطراف میں مختلف دیہاتوں خروٹ آباد،تنگی بانڈہ ،وزیر و کلے اور خواصی بانڈہ کا محاصرہ کرتے ہوئے پولیس اور سیکیورٹی فورسز کی بھاری نفری نے بدھ کی صبح گھر گھر تلاشی آپریشن شروع کیا اور اس دوران 36مشتبہ افراد کو حراست میں لیکر انکے قبضے سے مجموعی طور پر ایک رائفل ،دو پستول اور درجنوں کارتوس برآمد کرلئے گئے ۔کاروائی کے دوران گرفتار ہونے والے افراد کو فوری طور پر تھانہ جرما منتقل کردیا گیا جہاں بعض افراد کے خلاف ناجائز اسلحہ رکھنے کے جرم میں مقدمات درج کرلئے گئے جبکہ مشتبہ افراد کی چھان بین کا سلسلہ جاری ہے۔ سرچ آپریشن کی اس کاروائی میں ڈی ایس پی سٹی سونا خان،ڈی ایس پی لاچی میرزلی خان،ایس ایچ او تھانہ جرما سریر الدین اور ایس ایچ او تھانہ محمد ریاض شہید اسلام الدین پر مشتمل آپریشنل ٹیموں میں پولیس اور سیکیورٹی فورسز کی بھاری نفری کے علاوہ ایلیٹ فورس، بم ڈسپوذل سکواڈ،خواتین پولیس ،حساس اداروں کے اہلکاروں اور کھوجی کتوں کی K.9یونٹ نے حصہ لیا۔آپریشن کی کاروائی کے دوران علاقے کی طرف آنے جانے والے راستوں پر پولیس اور سیکیورٹی فورسز کے اہلکاروں کو تعینات کرکے ناکہ بندی کرلی گئی تھی اور بغیر تلاشی کسی کو بھی اندر یا باہر جانے کی اجازت نہیں دی گئی۔

مزید :

پشاورصفحہ اول -