اسٹینڈرڈ چارٹرڈ کی جانب سے گول(GOAL) کا افتتاح

اسٹینڈرڈ چارٹرڈ کی جانب سے گول(GOAL) کا افتتاح

  

کراچی (اکنامک رپورٹر)اسٹینڈرڈ چارٹرڈنے پاکستان میں گول (GOAL)کا آغاز کر دیا۔گول(GOAL)اسٹینڈرڈ چارٹرڈ کا ایک اہم تعلیمی پروگرام ہے،جس کے تحت کم آمدنی کی حامل نوجوان لڑکیوں کو مالیاتی حوالے سے تعلیم ،زندگی کی مہارتیں اور ملازمت کی اہلیت سے آراستہ ہونے کی تربیت فراہم کی جاتی ہے۔ پروگرام کے2006میں آغاز سے اب تک یہ بین الاقوامی حیثیت سے ایک تسلیم شدہ عالمی تحریک کی صورت اختیار کر چکاہے جو 20ممالک میں فعال ہے اور اب تک 2,17,000 نوجوان لڑکیوں کو تعلیمی خدمات فراہم کرچکا ہے۔مجموعی طور پر کھیلوں اور زندگی کی مہارتوں پر مبنی تربیت کے ذریعے گول(GOAL)کا مقصد لڑکیوں کو خوداعتمادی،علم اور مہارتوں سے آراستہ کرنا ہے تاکہ وہ معاشی حوالے سے اپنے خاندان ،کمیونٹیز اور معاشرے میں مکمل طور پر ایک با صلاحیت قائدانہ کردار ادا کر سکیں۔اسٹینڈرڈ چارٹرڈ پاکستان کے چیف ایگزیکٹیو آفیسر شہزاد دادا نے اس افتتاح پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’اسٹینڈرڈ چارٹرڈ کی جانب سے گول(GOAL)کو پاکستان میں متعارف کرانے کا فیصلہ دراصل ان مسائل کے حل کے لئے معاونت کرنا ہے جو پاکستان میں نوجوان لڑکیوں کو درپیش ہیں، جن کے باعث ان پر برے اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔کھیلوں کی بنیاد پر قائدانہ مہارتوں کی تعمیر اور مالیاتی حوالے سے تعلیمی سرگرمیوں کے ذریعے گول(GOAL)کا مقصد نوجوان لڑکیوں کو خود اعتمادی ،علم اور ان مہارتوں سے آراستہ کرنا ہے جن کی انہیں اپنے خاندان ،کمیونٹیز اور معیشت میں ایک باصلاحیت قائدانہ کردار ادا کرنے کے لئے ضرورت ہوتی ہے۔‘‘یہ پروگرام ہمارے بین الاقوامی شریکِ کار این جی او’وومن وِن‘ کے ذریعے عمل میں لایا جاتا ہے، جو گول(GOAL) کے حوالے سے ہماری کلیدی شریکِ کار ہے۔ ’وومن وِن‘ ہمارے مقامی طور پر منتخب کردہ شریکِ کار’رائٹ تو پلے‘ RIGHT TO PLAYکوگول(GOAL)سے متعلق تربیت فراہم کرنے کے ساتھ تمام انتظامی معاملات اور ان کی نگرانی بھی کریگی۔’وومن وِن ‘اپنے منظم شریکِ کاروں کو لڑکیوں سے متعلق کھیل کے نیٹ ورک پرگول(GOAL) کا نصاب بھی فراہم کرتا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ اول -