اب ہوائی جہاز پر سوار ہونے کےلئے پاسپورٹ یا بورڈنگ کارڈ کی ضرورت نہیں 

    اب ہوائی جہاز پر سوار ہونے کےلئے پاسپورٹ یا بورڈنگ کارڈ کی ضرورت نہیں 

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) فضائی سفر کے لیے ایئرپورٹ پر جائیں تو بورڈنگ پاس اور پاسپورٹ دکھانے کے لیے طویل قطار میں لگنا انتہائی دشوار مرحلہ ہوتا ہے لیکن اب لندن کے ہیتھرو ایئرپورٹ پر ایسی مشینیں نصب کی جا رہی ہیں کہ مسافروں کو اس صعوبت سے نجات مل جائے گی۔ میل آن لائن کے مطابق ہیتھرو ایئرپورٹ پر کیوسک (Kiosk)مشینیں نصب کی جا رہی ہیں جولوگوں کے چہرے پہچاننے کی ٹیکنالوجی کی حامل ہیں۔ان مشینوں کی تنصیب کا منصوبہ مکمل ہونے کے بعد ہیتھروایئرپورٹ سے سفر کرنے والوں کو بورڈنگ پاس کی ضرورت ہی نہیں رہے گی بلکہ وہ ان مشینوں کے ذریعے اپنے پاسپورٹ سکین کریں گے۔رپورٹ کے مطابق ان مشینوں میں مسافروں کا ڈیٹا اور ایک تصویر موجود ہو گی۔ جب مسافر ان پر اپنا پاسپورٹ سکین کرے گا تو مشین ان کے چہرے کی تصویر لے کر اس کا محفوظ شدہ تصویر اور سفری تفصیلات کے ساتھ موازنہ کرے گی اور مسافر قطاروں میں لگے بغیر باآسانی اس مرحلے سے گزر جائیں گے۔رپورٹ کے مطابق اس منصوبے پر 50کروڑ پاﺅنڈ (تقریباً 9ارب 14کروڑ روپے) لاگت آئے گی۔ ہیتھرو ایئرپورٹ پر مسافروں کے چہروں کی شناخت کا سسٹم پہلے سے نصب ہے تاہم یہ سسٹم ایئرپورٹ پر آنے والوں کے لیے ہے۔ ایئرپورٹ پر بائیومیٹرک ای گیٹ لگائے گئے ہیں اور ان سے گزر کر مسافر برطانیہ میں داخل ہوتے ہیں۔ ایئرپورٹ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ایئرپورٹ سے روانہ ہونے والے مسافروں کے لیے ان مشینوں کی تنصیب چند ہفتوں میں مکمل ہو جائے گی جس کے بعد انہیں آپریشنل کر دیا جائے گا۔ دوسری طرف برطانیہ کے دوسرے بڑے ایئرپورٹ ’گیٹ وِک‘ کی انتظامیہ کا بھی کہنا ہے کہ وہ بھی یہ مشینیں نصب کرنے کے متعلق غور کر رہی ہے۔

بورڈنگ کارڈ 

مزید : صفحہ آخر