وہ چرچ جو عبادت کرنے کے لئے آنے والوں میں چرس تقسیم کرتا ہے

وہ چرچ جو عبادت کرنے کے لئے آنے والوں میں چرس تقسیم کرتا ہے
وہ چرچ جو عبادت کرنے کے لئے آنے والوں میں چرس تقسیم کرتا ہے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) عبادت گاہیں عبادت کے لیے ہوتی ہیں لیکن آپ یہ سن کر حیران رہ جائیں گے کہ امریکہ میں ایک ایسا چرچ ہے جس میں عبادت کے لیے آنے والوں میں چرس تقسیم کی جاتی ہے اور مقامی حکام چرچ انتظامیہ کو اس قبیح حرکت سے روکنے کی سرتوڑ کوششیں کر رہے ہیں۔ wmtw.com کے مطابق ’ریسٹافریان‘ (Rastafarian)نامی یہ چرچ امریکی ریاست وسکانسن کے شہر میڈیسن میں واقع ہے، جس کا بانی جیس شیوارک نامی شخص ہے۔

رپورٹ کے مطابق جیس شیوارک چرس کی تقسیم کو ایک مذہبی رسم اور عبادت کا حصہ مانتا ہے اور اس نے چرچ کی ممبرشپ کے لیے یہی واحد شرط رکھی ہوئی ہے کہ یہاں عبادت کے لیے آنے والے لوگ چرس استعمال کریں گے اور تقسیم کریں گے۔رپورٹ کے مطابق چرچ کی انتظامیہ اپنی اس حرکت کو مخفی بھی نہیں رکھتی بلکہ اس میں آنے والے لوگ کھڑکیوں میں کھڑے ہو کر چرس پی رہے ہوتے ہیں اور راہ چلتے لوگ انہیں دیکھ رہے ہوتے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -