چینی رپورٹ میں تاخیر خدشات کو جنم دینے لگی،جاوید قصوری

چینی رپورٹ میں تاخیر خدشات کو جنم دینے لگی،جاوید قصوری

  

لاہور(سٹی رپورٹر)امیرجماعت اسلامی صوبہ پنجاب وسطی و صدر ملی یکجہتی کونسل پنجاب وسطی محمد جاوید قصوری نے کہا ہے کہ چینی رپورٹ میں تاخیر سے خدشات جنم لینے لگے ہیں۔ حکومت میں شامل بڑے کھلاڑی بے نقاب ہوچکے ہیں۔ ان کے خلاف بھی فوری کارروائی عمل میں لائی جانی چاہیے۔

عوام میں اس حوالے سے اضطراب بڑھتا جارہا ہے۔ چوروں، لٹیروں کی جگہ اسمبلیاں اور کابینہ نہیں بلکہ جیل ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز منصورہ میں عوامی وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت وقت کرونا کے ساتھ ساتھ مہنگائی کو بھی کنٹرول کرنے میں بری طرح ناکام رہی ہے۔ ناجائز منافع خوروں نے مہنگائی آرڈیننس کی پرواہ کیے بغیر عوام الناس کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے کا منصوبہ بنا رکھا ہے۔ رمضان المبارک میں سبزیوں، پھلوں کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں۔ لیموں مارکیٹ میں 600روپے فی کلو تک فروخت کیے جارہے ہیں۔ جبکہ کسی قسم کا کوئی چیک اینڈ بیلنس موجود نہیں۔ پرائس کنٹرول کمیٹیاں عملاً غیر فعال ہوچکی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت وزراء کرونا پر بھی سیاست کرنے میں مصروف ہیں۔ ایک طرف قوم کو اتحاد ویکجہتی کی ضرورت ہے تو دوسری طرف وزراء کے بیانات سے ملک میں انتشار اور افراتفری پھیل رہی ہے۔ محمد جاوید قصوری نے اس حوالے سے مزید کہا کہ ڈاکٹر اور نرسز کرونا حفاظتی کٹس کے حصول کے لیے کئی روز سے دھرنا دے رہے ہیں۔ مگر مجال ہے کہ حکمرانوں کے کانوں پر جوں تک رینگی ہو۔ اس وقت ملک بھر میں ایک سو سے زائد ڈاکٹر، نرسز اور دیگر ہیلتھ پروفیشنلز میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے اور اس کی براہ راست ذمہ دار حکومت خود ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -