وفاقی حکومت کی جانب سے فنڈز میں کٹوتی ہوئی ہے،ناصر حسین شاہ

وفاقی حکومت کی جانب سے فنڈز میں کٹوتی ہوئی ہے،ناصر حسین شاہ

  

کراچی (این این آئی) وزیر اطلاعات سندھ ناصر حسین شاہ اور ترجمان سندھ حکومت بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت کی جانب سے فنڈز میں کٹوتی ہوئی ہے، ہماری اپنی ریونیو بھی کم جمع ہوئی ہے اور کورونا وائرس کے باعث مزید کم ہونے کا امکان ہے،کورونا وائرس کے پیش نظرمعاشی مشکلات درپیش ہیں۔ سندھ کابینہ کے اراکین نے جون 2020 تک تنخواہیں نہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔سندکابینہ اجلاس کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ناصرشاہ کا کہنا تھا کہ سندھ کابینہ نے تین ماہ کی تنخواہیں نہ لینے کا فیصلہ کیا ہے اور کورونا وائرس کے حوالے سے اقدامات کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ آنے والے وقت میں ٹڈی دل سے نقصانات کا بھی اندیشہ ہے،وفاق نیٹڈی دل کے حوالے سے اسپرے کا کہا تھا جس پر عمل نہیں ہوا۔ناصر حسین شاہ نے کہا کہ صوبے میں ذخیرہ اندوزوں کے خلاف سخت ایکشن لینے کا فیصلہ کیا ہے۔سندھ حکومت نے کابینہ اجلاس میں کورونا آرڈیننس 2020 کو منظور کرکے اسے گورنر کو بھیجنے کی منظوری دیدی، آرڈیننس میں نجی اسکولوں کی فیسوں میں 20 فیصد کمی سمیت کسی ادارے سے ملازم کو نہ نکالنے اور تنخواہ دینے کو یقینی بنانے کے نکات بھی شامل ہیں۔ آرڈیننس کے تحت ایڈیشنل چیف سیکریٹری داخلہ اورتمام کمشنرز کو مجسٹریٹ کے اختیارات دیئے گئے ہیں، یہ پاور سی آر پی سی میں ترمیم کرنے کے بعد ڈیلیگیٹ کئے گئے ہیں۔آرڈیننس کا نام سندھ کووڈ 19 ایمرجنسی ریلیف آرڈیننس 2020 رکھا گیا ہے اور اس کے مطابق نجی اسکولوں کی فیسوں میں 20 فیصد کمی کی اصولی منظوری دی گئی ہے، فیس میں رعایت اپریل اور مئی 2020 کے لیے ہوگی۔آرڈیننس کیمتن میں کہا گیا ہے کہ کوئی ملازم نوکری سے نکالا نہیں جائے گا، نجی سیکٹرمیں کام کرنے والے ملازمین کی تنخواہ دینے کو بھی یقینی بنایا گیا ہے۔آجر کو فائدہ دینے کیلئے آرڈیننس میں کچھ کٹوتی کی بھی اجازت دی گئی ہے، تنخواہ کیسلیب نوٹیفائی ہونگے۔آرڈیننس شیڈول ٹو کے تحت بجلی کے بل میں رعایت دی گئی ہے، رہائشی علاقوں کے پانی کے ماہوار بل میں بڑی رعایت دی گئی ہے جبکہ گیس کھپت اور گھروں کے کرایوں میں بھی رعایت دی گئی ہے۔انہوں نے کہا کہ کابینہ اور ارکان سندھ اسمبلی ایک ماہ کی تنخواہ کورونا ایمرجنسی فنڈ میں دے چکے ہیں۔ترجمان حکومت سندھ مرتضی وہاب نے کہاکہ فوڈ ایکٹ کے تحت کریک ڈاؤن کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہیبین الصوبائی نقل وحرکت کوروکاجائے گا،کورونا آرڈیننس کی منظوری دی گئی ہے کورونا پھیلانے پر زیادہ سے زیادہ دس لاکھ جرمانے کی منظوری دی گئی ہے،گورنرکی منظوری کے بعد نافذالعمل ہوگا آرڈیننس کے تحت قیمتوں میں اضافے اورذخیرہ اندوزی کوروکنے کے لئے دس لاکھ تک جرمانہ کیا جاسکے گا۔

ناصر حسین شاہ

مزید :

صفحہ آخر -