سندھ حکومت کا ہر ضلع میں 100بستر پر مشتمل آئسولیشن سینٹر بنانے کا فیصلہ

سندھ حکومت کا ہر ضلع میں 100بستر پر مشتمل آئسولیشن سینٹر بنانے کا فیصلہ

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)صوبائی حکومت نے سندھ میں کورونا کے بڑھتے کیسز کے پیش نظر ہر ضلع میں 100 بستر پر مشتمل آئسولیشن سینٹر بنانے کافیصلہ کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت سندھ کابینہ کا اجلاس ہوا، کابینہ اجلاس میں کورونا سے جاں بحق افراد کے لئے دعائے مغفرت کی گئی اور وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کی کورونا وائرس کی صورتحال پر کابینہ کو آگاہ کیا۔وزیراعلی نے اجلاس کے شرکا کو بتایا کہ پیرکو صوبے میں 2733 ٹیسٹ کیے گئے، جن میں 341 نئے کیسز سامنے آئے جبکہ چار افراد اس وبا کے باعث انتقال کرگئے، جس کے بعد صوبے میں وائرس سے جاں بحق ہونے والے افراد کی تعداد85 تک جاپہنچی ہے۔مراد علی شاہ نے کابینہ کو بتایا کہ کورونا وائرس کے 3946 مریض زیرعلاج ہیں،2ہزار 705 مریض گھروں میں جبکہ 825 افراد آئسولیشن مراکز میں زیرعلاج ہیں،جن میں سے 24 کی حالت تشویشناک ہے اور 16 مریضوں کو وینٹی لیٹرز پر رکھا گیا ہے۔وزیراعلی سندھ نیصوبائی کابینہ کو آگاہ کیا کہ پیرکو ضلع شرقی کراچی میں 90، ضلع جنوبی میں 50 اور کورنگی میں 40 نئے کیسز سامنے آئے اسی طرح ملیر میں 30، ضلع وسطی میں 20، حیدر آباد اور لاڑکانہ میں 12، 12 کیسز رپورٹ ہوئے۔صوبائی کابینہ کے اجلاس میں وزیراعلی نے بتایا کہ کورونا کے مریضوں میں ممکنہ اضافے کے پیش نظر پی اے ایف میوزیم سائٹ میں 600 اور گڈاپ اسپتال میں 150بستروں کااضافہ کیا ہے جبکہ ایکسپو سینٹر میں گنجائش بڑھا کر 1500 بستر کردی گئی ہے اسی طرح دنبہ گوٹھ اسپتال میں 120 بستروں کا مرکز قائم کرنے کا فیصلہ کیا ہے، ساتھ ہی ہر ضلع میں 100 بستروں کا فیلڈ آئیسولیشن سینٹرقائم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کراچی (سٹاف رپورٹر) سندھ کابینہ نے کورونا ایمرجنسی ریلیف آرڈیننس کی منظوری دیدی، سندھ کورونا ایمرجنسی ریلیف آرڈیننس گورنر کی منظوری کے بعد نافذ العمل ہوگا۔وزیراعلیٰ مراد علی شاہ کی زیر صدارت سندھ کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں ایڈیشنل چیف سیکریٹری داخلہ کو خصو صی اختیارات تفویض کئے گئے، سندھ کے تمام کمشنرز کو بھی خصوصی اختیارات دینے کی منظوری دی گئی، خصوصی اختیارات دفعہ 144 کے تحت دئیے گئے۔مجوزہ آرڈیننس کے تحت کسی بھی ملازم کو ملازمت سے فارغ نہیں کیا جائیگا، کرایہ داروں سے مقررہ سلیب کی ادائیگی موخر کی جائیگی، پانی، بجلی، گیس کے بل میں مختلف سلیب پر رعایت دی جائے گی۔ اجلاس میں سندھ کابینہ نے سکول فیس میں بھی 20 فیصد کمی کی منظوری دی، احساس کفالت پروگرام کے تحت ادائیگی پر ایس بی آر ٹیکس بھی معاف کر دیا۔اجلاس میں صوبائی وزرا کے علاوہ مشیران، چیف سیکریٹری، چیئرمین پی اینڈ ڈی اور متعلقہ سیکریٹریز بھی شریک ہوئے۔ ترجمان وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق فیس میں رعایت اپریل اور مئی کیلئے ہے جبکہ ٹیکس معافی کا اطلاق صرف متعلقہ بینکنگ ایجنٹس کو ملنے والی کمیشن پر ہو گا۔

سندھ آرڈیننس

مزید :

صفحہ اول -