قابض بھارتی فوج کشمیریوں کی نسل کشی کرنے لگی، مزید 4نوجوان شہید 

قابض بھارتی فوج کشمیریوں کی نسل کشی کرنے لگی، مزید 4نوجوان شہید 

  

سرینگر (مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا کورونا وائرس سے نمٹنے کیلئے تگ و دو کر رہی ہے، وہیں ظالم بھارتی فوج مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی نسل کر رہی ہے، ضلع کلگام میں قابض بھارتی فوج نے مزید 4نوجوان شہید کر دیے۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مقبوضہ وادی کے ضلع کلگام کے علا قے قاضی گند میں بھارتی فوج نے سرچ آپریشن کی آڑ میں 4نوجوانوں کو شہید کردیا۔چوبیس گھنٹے میں شہدا کی تعداد13 ہو گئی،کشمیریوں نے ظالمانہ کارروائی کیخلاف احتجاج کیا،قابض فوج کے گشت سے لوگوں میں خوف وہراس پھیل گیا۔یاد رہے گز شتہ کئی روز سے ایک بار پھر مسلسل مقبوضہ وادی میں بھارتی فوج کی جانب سے کشمیری حریت پسند نوجوانوں کو مکاری کیساتھ شہید کرنے کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے۔ رمضان المبا ر ک کے دوران بھی بھارتی فوج کی ریاستی دہشت گردی جاری ہے۔ پولیس کا کہنا ہے تمام نوجوان ایک سرکاری ہائی سکول میں چھپے ہونے کی اطلاع پر فورسز نے تلاشی کاروائی شرو ع کی۔ بھارتی فوجیوں نے گزشتہ روز ضلع پلوامہ کے علاقے اونتی پورہ میں 3، جمعہ کو ضلع اسلام آباد کے علاقے کھار پورہ آرونی میں 2 جبکہ بدھ کے روز ضلع شوپیاں کے علاقے ملہو ر ہ میں محاصرے اور تلاشی کی کارروائیوں کے دوران4 کشمیری نوجوان شہید کر دیے تھے۔ سرچ آپریشن کی آڑ میں قابض افواج نے کلگام کے علاقے استھال پر دھاوا بول دیا۔ کلگام میں چوبیس گھنٹے کے دوران چار نوجوانوں کو گولیاں مار کر شہید کر دیا گیا۔ گزشتہ روز پلوامہ میں 3 اور جمعہ کو ضلع شوپیاں میں چار نوجوانوں کو شہید کیا گیا تھا۔دوسری جانب مسلسل لاک ڈاؤن اور محاصرے کی صورتحال سے دوچار کشمیری عوام ذ ہنی امراض کا شکار ہونے لگے ہیں۔امریکی اخبار نیویارک ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال پانچ اگست کے بعد سیکڑوں نوجوانوں کو بھارتی فوج نے اٹھایا تھا جن کے والدین آج بھی اپنے بچوں کی راہ دیکھ رہے ہیں اور شدید ذہنی پریشانی میں مبتلا ہیں۔

کشمیری نوجوان

مزید :

صفحہ اول -