وہ ملک جہاں کورونا کی روک تھام کے لیے شہروں کے درمیان دیواریں تعمیر ہو گئیں

وہ ملک جہاں کورونا کی روک تھام کے لیے شہروں کے درمیان دیواریں تعمیر ہو گئیں
وہ ملک جہاں کورونا کی روک تھام کے لیے شہروں کے درمیان دیواریں تعمیر ہو گئیں

  

نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن)دنیابھر میں کورونا وائرس سے بچاو کیلئے اقدامات اٹھائے جارہے ہیں جبکہ لوگوں کو ایک شہر سے دوسرے شہر جانے کیلئے روکنے کے مختلف اقدامات اٹھائے جارہے ہیں تاہم بھارت نے اپنے شہریوں کو روکنے کیلئے ایک شہر سے دوسرے شہر جانے والی سڑکوں پر دیواریں تعمیر کردی گئی ہیں۔

بی بی سی اردو کے مطابق جنوبی انڈیا کی ریاست تمل ناڈو کے ایک ضلع میں کووڈ 19کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ہمسائیہ ریاست آندھرا پردیش سے ملحقہ سرحد پر دیواریں تعمیر کی گئی ہیں۔تمل ناڈو کے ویلور ضلع اور آندھرا پردیش کے چٹور ضلع کے درمیان گاڑیوں کی آمدورفت کو روکنے کے لیے اتوار کے روز سرحد کے ساتھ ہی دو داخلی اور خارجی راستوں پر تقریبا 5، 5 فٹ لمبائی کی دیواریں کھڑی کی گئیں۔

ضلع ویلور کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ اس اقدام کا مقصد تارکین وطن مزدوروں کے داخلے کی جانچ پڑتال کرنا ہے جو بعض اوقات جائز اجازت نامے کے بغیر ہی ریاست میں داخل ہوجاتے ہیں۔

پی ٹی آئی نیوز ایجنسی سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا ’چونکہ مرکزی بارڈر کراسنگ پر شناخت ہونے کے امکانات زیادہ ہوتے ہیں اسی لیے کچھ لوگ دور دراز کے مقامات پر ایسی جگہوں کا استمال کرتے ہیں جن کے بارے میں کم لوگوں کو علم ہو۔‘

کچھ حکام نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ دونوں ریاستوں کے مابین گاڑیوں کی آمدورفت کو روکنے کے لیے یہ دیواریں ایک ’عارضی اقدام‘ ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -