پنجاب میں دونئے صوبوں کا قیام پارلیمانی کمیشن کا پہلا اجلاس آج ہوگا

پنجاب میں دونئے صوبوں کا قیام پارلیمانی کمیشن کا پہلا اجلاس آج ہوگا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


اسلام آباد (آئی این پی) پنجاب میں دو نئے صوبوں کے قیام کیلئے سفارشات کی تیاری کیلئے سپیکر قومی اسمبلی کے تشکیل کردہ پارلیمانی کمیشن کاپہلا اجلاس (آج ) منگل کو ہو گا ‘کمیشن کے پہلے اجلاس میں چیئرمین کے انتخاب کے علاوہ کمیشن اپنے قواعد وضوابط وضع کرے گا ۔ مسلم لیگ (ن) نے کمیشن میں نمائندگی کیلئے باقاعدہ طور پر کوئی نام نہیں بھجوایا تھا تاہم سپیکر قومی اسمبلی نے اپنے صوابدیدی اختیارات استعمال کرتے ہوئے کمیشن میں مسلم لیگ (ن) کے تین اراکین کو شامل کیا ہے ۔ سپیکر پنجاب اسمبلی نے تاحال 14 رکنی کمیشن کے لئے پنجاب اسمبلی سے کمیشن کے دو ارکان کے نام کا اعلان نہیں کیا۔ حکومت نے نئے صوبوں کے قیام کے حوالے سے مسلم لیگ (ن) کے دیگر جماعتوں کی نمائندگی بڑھانے کے مطالبے کو مسترد کرتے ہوئے کمیشن میں تمام جماعتوں کی نمائندگی برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ مسلم لیگ(ن) کا موقف ہے کہ وہ مشاورت کے بغیر بنائے جانے والے اس کمیشن کا حصہ نہیں بنیں گے۔ دوسری طرف پیپلز پارٹی نے پنجاب حکومت کو دھمکی دی ہے کہ اگر سپیکر پنجاب اسمبلی نے کمیشن کے (آج) ہونے والے اجلاس سے قبل پنجاب اسمبلی کے دو ارکان کے نام نہ دیئے تو (آج) شروع ہونے والا پنجاب اسمبلی کا اجلاس نہیں ہونے دیا جائے گا۔ پیپلز پارٹی کا الزام ہے کہ (ن) لیگ جان بوجھ کر کمیشن کیلئے نام نہیں دے رہی۔ ذرائع کے مطابق پیپلز پارٹی نے پنجاب اسمبلی میں سپیکر کی طرف سے کمیشن کیلئے دو ناموں کا اعلان نہ کرنے کی صورت میں ہنگامہ آرائی کیلئے (ق) لیگ سے بھی مشاورت کرلی ہے۔ سپیکر قومی اسمبلی نے 14 رکنی پارلیمانی کمیشن تشکیل دیا تھا جس میں قومی اسمبلی اور سینٹ کے چھ ‘ چھ ارکان کے ناموں کا اعلان کیا گیا تھا تاہم پنجاب اسمبلی کے دو ارکان کی کمیشن کے لئے نامزدگی سپیکر پنجاب اسمبلی نے کرنی ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -