فنڈز کی عدم دستیابی ،سبزی منڈی کی منتقلی کامنصوبہ کھٹائی میں پڑ گیا

فنڈز کی عدم دستیابی ،سبزی منڈی کی منتقلی کامنصوبہ کھٹائی میں پڑ گیا

                                               لاہور(اپنے نمائندے سے )فنڈز کی عد م دستیابی یا انتظامی افسران کی سستی ،سبزی منڈی کے لیے مختص کی جانے والی اراضی کا قبضہ لینے کے باوجود تاحال کوئی کام نہیں کیا جا سکا ایک سال میں سبزی منڈی کی تعمیر وآرائش کا معاملہ کھٹائی میں پڑ گیا روزنامہ پاکستان کو ملنے والی معلومات کے مطابق صوبائی دارالحکومت میں سبزی منڈی کی منتقلی اور تعمیرو آرائش کا معاملہ سست روی کا شکار ہوچکا ہے ایک سال میں اس منصوبے کو مکمل کیے جانے کے تمام وعدے دھرے کے دھرے رہ گئے ہیں ریونیو زرائع کا کہنا ہے کہ موضع رائے ونڈ اور لکھو ڈیر کی حدود میں آنیوالی 1079کنال اراضی کی ایکوزیشن مکمل ہوچکی ہے اس ضمن میں اراضی مالکان کو معاوضہ کی ادائیگیاں بھی کر دی گئی ہیں اور ریونیو ریکارڈ میں سبزی و پھل منڈی کے نام سے باقاعدہ انتقا ل کی تصدیق بھی کی جاچکی ہے زرائع نے مزید بتایا کہ مقامی زمینداروں اور پرانے آڑھتیوں نے بھی مارکیٹ کمیٹی کے افسران سے ملاقات کرتے ہوئے انہیں 10کنال سے زائد اراضی آڑھتیوں کی تعمیر کے لیے مختص کرنے کی استدعا بھی کی ہے جس پر ابھی تک کوئی حتمی فیصلہ نہیں کیا جاسکا مارکیٹ کمیٹی زرائع کا کہنا ہے کہ ہمیں اطلاعات ملی ہیں کہ آئندہ چند روز میں سبزی منڈی کی تعمیر کے لیے جو فنڈز مختص کیے گئے تھے وہ ہمیں مل جائیں گے اور اس حوالے سے چیئرمین پی این ڈی کے پاس بھی تمام تر اطلاعات ہیں جیسے ہی فنڈز ملیں گے ترقیاتی کام تیزی سے شروع کر دیا جائے گا ابتدائی طور پر سبز ی منڈی کو آباد کرنے کے لیے نقشہ جات مکمل کر لیے گئے ہیں چند دنوں کی بات ہے سبزی منڈی مختص کردہ اراضی پر منتقل کر دیں گے

مزید : میٹروپولیٹن 1