براہمداغ بگٹی کا بلوچستان کے حوالے سے بیان خوش آئند ہے،وسیم اختر

براہمداغ بگٹی کا بلوچستان کے حوالے سے بیان خوش آئند ہے،وسیم اختر

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)پارلیمانی لیڈرصوبائی اسمبلی وامیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹر سید وسیم اخترنے بلوچ رہنمابراہمداغ بگٹی کے بیان کہ’’آزادبلوچستان کے مطالبے سے دستبرداری اور مذاکرات پرتیارہیں‘‘کاخیر مقدم کرتے ہوئے کہاہے کہ حکومت پاکستان اور عسکری قیادت دانشمندانہ فیصلے کرتے ہوئے بلوچستان کے عوام کوتمام حقوق دے بے روزگارنوجوانوں کوسرکاری نوکریوں میں خاطر خواہ حصہ دیاجاناچاہئے۔

بندوق سے مسائل حل نہیں بلکہ نئی خانہ جنگی بڑھتی اور مشکلات میں اضافہ ہوتا ہے جماعت اسلامی شروع دن سے کہہ رہی ہے کہ ناراض لوگوں کومنایاجاناچاہئے اور اس حوالے سے امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق متعدد بار اپناکردار اداکرنے کی پیشکش کرچکے ہیں۔انہوں نے کہاکہ بلوچستان کے عوام غیوراورمحب وطن ہیں وزیراعظم نوازشریف وفاق کی جانب سے بلوچ قوم کے ساتھ ہونے والی ناانصافیوں کاازالہ کریں بلوچستان میں خوشحالی کامطلب پاکستان کاترقی یافتہ ہوناہے۔اللہ تعالیٰ نے ملک اور بالخصوص صوبہ بلوچستان کومعدنیات کی دولت سے مالامال بنایا ہے ۔ گوادر پر چین کے تعاون سے تیزی کے ساتھ کام ہورہا ہے اقتصادی راہداری منصوبے کی تکمیل سے خوشحالی کاایک نیادور آئے گا جوکہ بھارت کو ایک آنکھ نہیں بھا رہا ۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ حکومت اور عسکری قیادت دشمن کی تمام سازشوں کوخاک میں ملانے کیلئے آگے بڑھے پوری قوم اور تمام سیاسی ودینی جماعتیں ان کی پشت پر کھڑی ہیں۔ڈاکٹر سید وسیم اختر نے مزیدکہاکہ بھارت اپنی خفیہ تنظیم’’را‘‘کی مداخلت کے ذریعے بلوچستان کے حالات خراب کررہا ہے جس کے واضح ثبوت بھی موجود ہیں۔حکومت ہندوستان کے گھناؤنے چہرے کوعالمی دنیا کے سامنے بے نقاب کرے۔جب تک ملک دشمن تمام قوتوں کومنہ توڑ جواب نہیں دیاجائے گا وہ باز نہیں آئیں گے۔ جاری کردہ

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -