حج کا تفصیلی طریقہ احرام حج ( فرض)

حج کا تفصیلی طریقہ احرام حج ( فرض)

  

8 ذی الحجہ کو بعد نماز فجر یہ ارادہ کیجئے کہ ’’اب میں حج کا احرام باندھ رہا ہوں‘‘۔ ’’نیت‘‘ دل کے ارادے کا نام ہے، البتہ زبان سے نیت کے الفاظ ادا کرنا بھی مستحب ہے: اَللّٰھُمَّ اِنِّیْ اُرِیْدُالْحَجَّ فَیَسِّرْہٗ لِی وَتَقَبَّلْہُ مِنِّیْ طاے اﷲ! میں حج کا ارادہ کرتا ہوں ،آپ ا سکو میرے لئے آسان فرما دیجئے اور میری طرف سے قبول کر لیجئے۔نیت کرنے کے بعد آپ تلبیہ پڑھیں: لَبَّیْکَ اَللّٰھُمَّ لَبَّیْکَ ط لَبَّیْکَ لَا شَرِیْک لَکَ لَبَّیْکَ ط اِنَّ الْحَمْدََ وَالنِّعْمَۃَلَکَ وَالْمُلْکَ ط لَا شَرِیْْکَ لَکَ ط

احرام باندھتے وقت ایک مرتبہ تلبیہ پڑھنا ضروری ہے ا ور تین مرتبہ تلبیہ پڑھنا سنت اور افضل ہے ،مرد اونچی آواز سے پڑھیں اور خواتین آہستہ آواز سے پڑھیں،تلبیہ پڑھنے کے بعد درود شریف پڑھیں اور یہ دعا پڑھیں: اَللّٰھُمَّ اِنِّیًْ اَسْءَلُکَ رِضَاکَ وَالْجَنَّۃَ وَ اَعُوْذُ بِکَ مِنْ غَضَبِکَ وَالنَّارِ ط

آپ کے حج کا احرام شروع ہو گیا اور آپ پروہی پابندیاں لگ گئیں جو عمرہ کا احرام باندھتے وقت لگی تھیں۔ ہو سکے تو مسجد حرام میں جا کر احرام باندھنا افضل صورت ہے لیکن اگر آپ وہاں نہ جا سکیں تو اپنی قیام گاہ پر احرام باندھ لیں ، نفلی طواف کا موقع مل جائے تو طواف کر کے قیام گاہ پر آجائیں ، اور نفلیں پڑھ کر احرام کی چادریں باندھ کر نیت کریں۔

معذور خواتین کیا کریں : اگر خواتین معذوری کی حالت میں ہوں تب بھی ان کے لئے 8ذی الحجہ کو حج کا احرام باندھنا ضروری ہے ،البتہ ایسی خواتین نہ تو مسجد حرام میں جائیں اور نہ ہی نفلیں پڑھیں ، بلکہ اپنی قیام گاہ پرقبلہ رخ بیٹھ کر حج کے احرام کی نیت کر کے تلبیہ پڑھ لیں ۔ احرام باندھنے سے پہلے ان کے لئے غسل کرنا بہتر ہے ، یہ غسل طہارت کے لئے نہیں بلکہ نظافت اور صفائی کے لئے ہے۔

مزید :

ایڈیشن 1 -