ہائی کورٹ :آغا غضنفر تاحکم ثانی ایچی سن کالج کے معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے ،مفاہمتی فارمولا طے پا گیا

ہائی کورٹ :آغا غضنفر تاحکم ثانی ایچی سن کالج کے معاملات میں مداخلت نہیں کریں ...
ہائی کورٹ :آغا غضنفر تاحکم ثانی ایچی سن کالج کے معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے ،مفاہمتی فارمولا طے پا گیا

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس مامون رشید شیخ نے فریقین کی باہمی رضامندی سے ایچی سن کالج کے پرنسپل آغا غضنفر کی برطرفی کے خلاف اپنے عبوری حکم امتناعی میں ترمیم کرتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ آئندہ تاریخ سماعت تک آغا غضنفر پرنسپل کی رہائش گاہ سمیت تمام مراعات استعمال کرسکیںگے تاہم وہ انتظامی اورتعلیمی معاملات میںمداخلت نہیں کریں گے۔ فاضل جج نے یہ ترمیمی حکم امتناعی ایچی سن کالج کے بورڈ آف گورنرز کی متفرق درخواست پر جاری کیا ،اس سے قبل فاضل جج نے فریقین کو اس معاملہ پر گفت وشنید اور مصالحت کا موقع فراہم کیا ،جس پر آغا غضنفر نے بورڈ آف گورنرز کے وکیل خواجہ طارق رحیم کے چیمبر میں ان کے ساتھ مذاکرات کئے جس کے بعد فریقین نے عدالت میں پیش ہوکر آغاغضنفر کے حق میں جاری ہونے والے 13اگست کے عبوری حکم امتناعی میں ترمیم کی استدعا کی اورعدالت کو بتایا کہ فریقین میں طے پایا ہے کہ آغاغضنفر ایچی سن کالج کے انتظامی اور تعلیمی معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے تاہم وہ پرنسپل کی مراعات سے بدستور استفادہ کرنے مجاز ہوں گے ۔انہوں نے عدالت کو بتایا کہ فریقین نے مصالحت کے حوالے سے مذاکرات جاری رکھنے پر آمادگی ظاہر کی ہے ۔اس وقت گورنر پنجاب ملک سے باہر ہیں ،وہ 7ستمبر کو واپس آئیں گے ۔بورڈ آف گورنرز کے چیئرمین کی حیثیت سے معاملہ ان کے سامنے بھی رکھا جائے گا ،جس پر فاضل جج نے قرار دیا کہ آئندہ تاریخ 30ستمبر تک مصالحت نہ ہوئی تو پھرعدالت حالات و واقعات کی روشنی میں مقدمہ کا فیصلہ کرے گی ۔فاضل جج نے بورڈ آف گورنرز کے وکلاءاظہر صدیق اورمحمد اشرف خان کی استدعا پر اس کیس کی اپنے چیمبر میں سماعت کی ۔وکلاءکا کہنا تھا کہ معاملہ حساس نوعیت کا ہے ،اس لئے اس کی سماعت بند کمرے میں ہونی چاہیے ۔دوران سماعت فاضل جج نے ریمارکس دیئے کہ دونوں اطراف معزز شخصیات ہیں عدالت میں کوئی بھی ناخوشگوار بات نہیں ہونی چاہیے۔عدالت نے 13دسمبر کو ایک عبوری حکم امتناعی کے ذریعے آغا غضنفر کی ایچی سن کالج کے پرنسپل کے طور پر برطرفی کو معطل کردیا تھا جس کے خلاف اس کالج کے بورڈ آف گورنرز نے متفرق درخواست دائر کی ہے کہ آغا غضنفر کے حق میں جاری عبوری حکم امتناعی ختم کیا جائے جبکہ آغا غضنفر کی طرف سے عدالت کو بتایا گیا کہ عدالتی حکم کے باوجود انہیں ایچی سن کالج میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جارہی ۔فاضل جج نے قرار دیا کہ اس متفرق درخواست کی مزید سماعت بنیادی رٹ درخواست کے ساتھ 30ستمبر کو ہوگی ۔

مزید :

لاہور -