پائلٹ کی کاک پٹ میں ایسی چیز کے ساتھ شرمناک ترین حرکتیں کہ ایئرلائن نے فوری نوکری سے ہی نکال دیا،کوئی لڑکی نہیں تھی بلکہ۔۔۔

پائلٹ کی کاک پٹ میں ایسی چیز کے ساتھ شرمناک ترین حرکتیں کہ ایئرلائن نے فوری ...
پائلٹ کی کاک پٹ میں ایسی چیز کے ساتھ شرمناک ترین حرکتیں کہ ایئرلائن نے فوری نوکری سے ہی نکال دیا،کوئی لڑکی نہیں تھی بلکہ۔۔۔

  

ویلنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) نیوزی لینڈ کی فضائی کمپنی ایئرنیوزی لینڈ کی ایک پرواز کے پائلٹ اور عملے کے ارکان دوران پرواز ایسی شرمناک حرکات کرتے ہوئے پکڑے گئے کہ کمپنی نے انہیں نوکری سے نکال دیا ہے۔ ویب سائٹ worldwideweirdnewsکی رپورٹ کے مطابق اس عملے کی شرمناک حرکات کی ایک ویڈیو انٹرنیٹ پر گردش کرتی ہوئی پائی گئی جسے دیکھ کر انتظامیہ نے ان کے خلاف کارروائی کی۔ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ جہاز کا پائلٹ دوران پرواز کاک پٹ میں ایک ”جنسی گڑیا“ (Sex Doll)کو بوسے دے رہا تھا جبکہ عملے کے کچھ ارکان مسافروں کے ساتھ انتہائی بدتمیزی کر رہے تھے اور ان پانی کی قلیاں کر رہے تھے۔

دبئی میں بنگلہ دیشی شہری شادی کا جھانسہ دے کر غیر ملکی خادمہ کو کفیل کے پاس سے بھگالے گیا لیکن بھگاتے ہی اسے کہاں لے گیا؟ ایسا انکشاف کہ جان کر ہر لڑکی کانپ اُٹھے

ایئرنیوزی لینڈ کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ”ہم نے مسافروں کے ساتھ توہین آمیز سلوک کرنے پر تین ملازمین اور ایک پائلٹ کو نوکری سے نکال دیا ہے۔ ایئرلائنز کی تحقیقات میں بتایا گیا ہے کہ یہ ویڈیو اور تصاویر پہلے سنیپ چیٹ پر ایئرلائنز ہی کے ملازمین کے ساتھ شیئر کی گئیںجہاں سے یہ فیس بک پر بھی پھیل گئی۔ کمپنی کی ترجمان کا کہنا تھا کہ ”کمپنی کو اس ویڈیو سے شدید جھٹکا لگا ہے۔ یہ واقعہ انتہائی سنجیدہ نوعیت کا ہے اور عملے نے مسافروں کے ساتھ جو سلوک اختیار کیا وہ قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہے۔ ان بدتمیزی کے مرتکب ملازمین کو نوکری سے فارغ کر دیا گیا ہے۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -