عوام کی شکایات کے ازالے کیلئے جلد سسٹم لائیں گے،سعید غنی

عوام کی شکایات کے ازالے کیلئے جلد سسٹم لائیں گے،سعید غنی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر بلدیات سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ صوبے میں عوام کی شکایات کے ازالے کیلئے جلد ایک سسٹم لائیں گے ۔کراچی میں سب سے بڑا مسئلہ پینے کے پانی کا ہے۔واٹر بورڈ کے لوگوں کی محنت کے باوجود ہم پانی کا مسئلہ حل نہیں کرسکے۔بلدیات کے محکموں کو درست کرنے کی ذمہ داری مجھے دی گئی ہے۔کام چوروں سے سختی اور محنت کرنے والوں کی سرپرستی بھی کرونگا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کو واٹراینڈ سیوریج بورڈ میں اجلاس کی صدارت اور میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔سعید غنی نے کہا کہ اب ہم نے حتمی فیصلہ کرلیا ہے کہ گھوسٹ ملازمین کو نکال باہر کریں گے ۔جن علاقوں کو برسوں سے پانی نہیں ملا وہاں پانی ان علاقوں سے منصفانہ تقسیم کرکے پہنچائیں گے جہاں پانی وافر مقدار میں آتا ہے ۔واٹر بورڈ میں مشکلات ضرور ہیں لیکن محکمے کو درست کرنے کیلئے اپنا کردار ادا کریں گے۔سب کو صبح نو بجے نوکری پر آنا ہوگا۔جو تنخواہ لی گا وہ کام کرے گا۔جو کام نہیں کرے وہ نوکری چھوڑ دے۔ورنہ ہم اسے فارغ کردیں گے۔ادارے کی آمدنی کم اخراجات زیادہ ہیں۔کے الیکٹرک جو بل چارج کرتی ہے وہ انڈسڑیل ریٹ ہیں۔واٹر بورڈ کوئی انڈسٹری نہیں ہے۔ہم بل دینے کو تیار ہیں لیکن کے الیکٹرک کو ریٹ بدلنا چائیے سعید غنی نے کہا کہ سندھ بھر میں جلد ایک مکینزم لارہا ہوں جس کے ذریعے شہری براہ راست شکایات مجھ تک پہنچا سکیں گے ۔ میں تمام بلدیاتی اداروں کی بات کرتا ہوں جبکہ مئیر کراچی صرف کے ایم سی کے سربراہ ہیں ۔انہوں نے کہا کہ مجھ سے پہلے بھی جو وزرا یہاں تھے انہوں نے بھی معاملات بہتر بنانے کی کوشش کی تھی ہوسکتا ہے میں بھی سو فیصد کامیاب نہ ہوں۔ہم سب نے کام کرنے کی کوشش کرنی ہے ۔کچھ وقت دیں سب تبدیلی دیکھیں گے