سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی کے لئے 232 ملین روپے کا بجٹ منظور

    سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی کے لئے 232 ملین روپے کا بجٹ منظور

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)وزیر توانائی سندھ امتیاز احمد شخ کی صدارت میں سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی (SLCMC) کی بورڈ میٹنگ آج محکمہ توانائی سندھ کے دفتر میں منعقد ہوئی۔اجلاس میں سیکریٹری توانائی سندھ مصدق احمد خان، سیکریٹری خزانہ سندھ نجم شاہ اور ڈائریکٹر جنرل سندھ کول اتھارٹی خادم چنہ جو بورڈ کے اراکین بھی ہیں کے علاوہ چیف ایگزیکیٹیو آفیسر سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی(۔ SLCMC) توفیق احمد ارائیں اور بورڈ کے دیگر ارکان نے شرکت کی۔اجلاس میں سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی کے لئے 232 ملین روپے بجٹ کی منظوری اور کمپنی کو کراچی میں مرکزی دفتر جبکہ لاکھڑا میں پراجیکٹ دفتر کھولنے کی بھی منظوری دی گئی۔اجلاس میں کمپنی کو لاکھڑا میں کوئلے کی ایکسپلو ریشن اور کان سے نکلنے والے کوئلے کی فروخت اور ترسیل کے لئے نجی کمپنی کے ساتھ مفاہمتی یادداشت پر دستخط کرکے پیش قدمی کرنے کی ہدایت کی گئی۔اس موقع پر وزیر توانائی سندھ امتیاز احمد شیخ جو سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی کے بورڈ کے چیئر مین بھی ہیں نے ہدایت کی کہ لاکھڑا اور قرب و جوار کے علاقوں کے نوجوانوں کو لاکھڑا پراجیکٹ سے فوری اور مستقل فائدہ پہنچانے کے لئے لاکھڑا میں اسکل ڈیولپمنٹ سینٹر قائم کیا جائے جہاں نوجوانوں اور محنت کشوں کو کان کنی اور دیگر متعلقہ ٹیکنیکل شعبوں میں تربیت کی فراہمی کا انتظام کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ 30 سال سے لاکھڑا کی لیز وفاق کے پاس تھی اورلاکھڑا سے گذشتہ 30 سال سے وفاقی حکومت کی کمپنی کوئلہ نکال رھی تھی لیکن یہاں کی مقامی آبادیوں کو اس نعمت سے کوئی دیرپا فایدہ نہیں پہنچایا گیا۔اب وفاقی کمپنی کی لیز ختم ہو نے پر سندھ حکومت کی اپنی کمپنی یہاں سے کوئلہ نکالے گی تو اس کا پہلا فائدہ مقامی لوگوں کے لئے اسکل ڈیولپمنٹ سینٹر کی صورت میں دیا جائے گا تاکہ مقامی آبادی کو روزگار کے مواقع مل سکیں اور وہ ان مواقعوں سے بہتر انداز میں فایدہ اٹھائیں۔انہوں نے افسران کو ہدایت کی کہ لاکھڑا کوئلے کے ذخائر سے معیشت کو زیادہ سے زیادہ فائدہ پہنچانے کی منصوبہ بندی کریں اور سندھ لاکھڑا کول مائننگ کمپنی آپنی کارکردگی سے صوبے کی معیشت کو مستحکم کرنے میں اپنا کردار ادا کرے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -