مذہب کی نمائندگی کرنے والوں کا کردار پاکیزہ ہونا چاہیے،راغب نعیمی

مذہب کی نمائندگی کرنے والوں کا کردار پاکیزہ ہونا چاہیے،راغب نعیمی

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)دارالعلوم جامعہ نعیمیہ کے ناظم اعلیٰ وممبراسلامی نظریاتی کونسل علامہ ڈاکٹرراغب حسین نعیمی نے کہاہے کہ مذہب کی نمائندگی کرنے والوں کاکردارانتہائی پاکیزہ ہوناچاہیے۔دین کی تعلیم حاصل کرنے والے خود کو معاشرے کی ہربرُائی سے بچائیں۔خود احتسابی کے عمل پیرا ہوکر ہمیں اپنے اچھے اوربرُے اعمال کامحاسبہ کرناچاہیے۔۔ ماحول کو پاکیزہ بنانے کے لئے اپنے اردگرد رہنے والے افراد کودرست سمت رہنمائی کرناہوگی۔

بحیثیت مسلمان دنیا میں رہتے ہوئے ہمیں آخرت کی تیار کرناہوگا۔مدارس دینیہ کے طلبہ کواعلی ٰاخلاقی اقدار،بلند محاسن کاعمل نمونہ ہوناچاہیے۔اصلاح معاشرہ کے لئے ہمیں ضرورت اس امرکی ہے کہ نبی کریمؐ کی حیات مبارکہ کامطالعہ کریں اوران تعلیمات سے رہنمائی حاصل کریں ہمیں ہرحال میں اپنے قول وکردار میں اللّٰہ اور اس کے رسول کی اطاعت او راتباع کی جستجو کرنا چاہیے۔ان خیالات کااظہار انہوں نے گزشتہ روزجامعہ نعیمیہ میں بزم نعیمیہ کے نومنتخب عہدیداروں کی تقریب سے حلف برداری سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔حلف اٹھانے والوں میں صدر قاری سعید احمدنقیبی،جنرل سیکرٹری جمال الدین،نائب صدرحنظلہ اشفاق،سیکرٹر ی خزانہ راشدعلی چشتی سمیت دیگر 26کارکنان شامل ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -