پارک لین کیس، زرداری کیخلاف ضمنی ریفرنس دائر کرنیکا فیصلہ

پارک لین کیس، زرداری کیخلاف ضمنی ریفرنس دائر کرنیکا فیصلہ

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) نیب نے پارک لین کیس میں نئے شواہد حاصل کر لئے، آصف زرداری کے خلاف ضمنی ریفرنس دائر کیا جائے گا۔ ملزمان پر قرض کے نام پر فراڈ سے نیشنل بنک کو اربوں روپے کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے۔اڈیالہ جیل کے قیدی آصف زردای کی مشکلات میں مزید اضافہ، نیب کو پارک لین کیس میں نئے شواہد مل گئے۔ سابق صدر کے خلاف ضمنی ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ، متعلقہ عدالت کو آگاہ کر دیا گیا۔نیب کے مطابق پارک لین کیس میں ایس ای سی پی ریکارڈ اور مختلف گواہان کے بیانات سے نئے شواہد سامنے آئے، ملزمان نے نیشنل بینک سے پہلے ڈیڑھ ارب پھر 80 کروڑ روپے کا قرض حاصل کیا، ملازمین کے نام پر جعلی کمپنی پارتھینون بنائی اور آئی بی سی سنٹر میں جائیداد خریدی گئی، نیب نے سنٹر میں 8 فلور سیل کر رکھے ہیں، آصف زرداری پارک لین کمپنی میں 25 فیصد شیئرز کے مالک ہیں۔

پارک لین کیس

راولپنڈی(سٹاف رپورٹر)چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال نے نیب راولپنڈی کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے کہا کہ نیب افسران بنا کسی خوف اپنا کام ایمانداری کے ساتھ جاری رکھیں۔تفصیلات کے مطابق چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے نیب راولپنڈی کا دورہ کیا، اس موقع پرڈی جی نیب راولپنڈی عرفان ملنگی نے چیئرمین نیب کو بریفنگ دی۔ڈی جی نے چیئرمین نیب کوجعلی اکاونٹس کیس،این ایل جی کیس سماعت دیگرمیگا کرپشن کیسزپر تفصیلی بریفنگ دی۔چیئرمین نیب نے نیب راولپنڈی کی کارکردگی کو سراہا  اور کہا  کہ نیب افسران بنا کسی خوف اپنا کام ایمانداری کے ساتھ جاری رکھیں۔تفصیلات کے مطابق چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال کو بتایا گیا ہے کہ نیب راولپنڈی نے جعلی بینک اکاؤنٹس سکینڈل میں سابق صدر آصف علی زرداری، فریال تالپور، عبدلغنی مجید، یونس قدوائی اورحسین لوائی سمیت دیگر بدعنوان عناصر کے خلاف بدعنوانی کے 6 ریفرنس دائر کئے ہیں اور13 ارب روپے سے زائد رقم برآمد کرکے قومی خزانے میں جمع کرائی ہے،41ملزموں کے نام ای سی ایل میں ڈالے گئے ہیں، 21انکوائریاں اور 12انویسٹی گیشن جاری ہیں۔نیب راولپنڈی نے تقریبا 51 ارب 46لاکھ روپے سے زائد مالیت کی املاک منجمند کی ہیں۔ 

چیئرمین نیب 

مزید :

صفحہ اول -