جہانگیرہ،عمائدین کی کاؤشوں سے دیرینہ دشمنی کا خاتمہ

جہانگیرہ،عمائدین کی کاؤشوں سے دیرینہ دشمنی کا خاتمہ

  

جہانگیرہ (نمائندہ پاکستان)جہانگیرہ میں دو فریقین کی دشمنی دوستی میں بدل گئی،تفصیلات کے مطابق حاجی ذوالفقار احمد اورمحمد ارشد،شوکت علی کے مابین ۲۲ لاکھ روپے کا تنازعہ چلا آرہاتھا، جس میں محمد ارشد فریق نے حاجی ذوالفقار احمد فریق پر سولہ ساتھیوں سمیت قاتلانہ حملہ کر کے شدید زخمی کر دیا،اور فائرنگ بھی کی،جس سے ذوالفقاراحمد اور انکے بیٹے حسنین احمد،اویس،عبد الصمد اور ارسلان احمد زخمی ہو ئے،جس کی ایف آئی آر تھانہ اکوڑہ خٹک میں درج ہوا اور زخمیوں کو فوری طبی امداد کے لئے ہسپتال منتقل کیا گیا،تاہم علاقہ اور جر گہ مشران حاجی فضل ربی،عاصم خان،تحصیل لاہور ناظم سہیل خان، چیئرمین پریس کلب جہانگیرہ حاجی زبیر علی،حاجی طارق تارج، حاجی لیاقت علی،حاجی شعیب،حاجی قریش،خانزادہ اعوان،سلیم شاہ بابا،سلمان احمد،محمود علی،گوہر آفریدی،امجد خاکسارفضل الرحمن بابو،افتخار خان اور حاجی ارشادعلی، طاہر زمان و دیگر مشران نے کافی تگ و دو کر تے ہو ئے مزید خون خرابے سے دونوں فریقین کو بچایا اورجرگہ مشران نے حاجی ذوالفقار احمد اور انکے زخمی بیٹوں کی پاداش میں فریقین دوم محمد ارشد کو ۸ لاکھ روپے جر مانہ کر کے گزشتہ روز حجرہ امداداللہ میں بغل گیر کر کے انکی دشمنی ہمیشہ ہمیشہ کے لئے دوستی میں بدل دیا،علاقہ عمائدین نے اس مو قع پر بتا یا کہ مذکورہ صلح نامہ نہایت خوش آئند اقدام ہے اور اس صلح میں علا قے کے سیاسی،سماجی شخصیات نے بنیادی کر دار ادا کیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -