متنی کی حدود میںنوجوان کے اندھے قتل میں ملوث ملزم گرفتار

  متنی کی حدود میںنوجوان کے اندھے قتل میں ملوث ملزم گرفتار

  

پشاور(کرائمز رپورٹر)کیپٹل سٹی پولیس پشاور نے شہر کے نواحی علاقہ متنی میں اپنے ہی چچا زاد بھائی کے اندھے قتل میں ملوث ملزم کو گرفتار کرلیا، گرفتار ملزم نے اس ماہ کی 14 تاریخ کو رات کی تاریکی میں اپنے چچا زاد کو کلہاڑی کے وار کر کے قتل کیا تھاجس نے ابتدائی تفتیش کے دوران اپنے چچا زاد کو مستورات تنازعہ پر قتل کرنے کا انکشاف کیا، ملزم کی نشاندہی پر اس کے قبضہ سے آلہ قتل کلہاڑی بھی برآمد کر لی گئی ہے، ملزم سے مزید تفتیش جاری ہے تفصیلات کے مطابق مدعی شاہد گل ولد حاجی جنت گل سکنہ کو ہاٹ روڈ نزد جنگلی نہر نے تھانہ متنی پولیس کو رپوٹ درج کراتے ہوئے بیان کیا کہ اس کے بھائی محمد آمین ولد جنت گل کو رات کی تاریکی میں کسی نامعلوم ملزم نے کلہاڑیوں کے وار کرکے قتل کردیاہےے جس کی رپورٹ پر نامعلوم ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی ایس پی صدر ڈویژن صاحبزادہ سجاد نے نوجوان کے اندھے قتل کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی ایس پی صدر سرکل توحیداللہ اور ایس ایچ او تھانہ متنی سید رسول پر مشتمل خصوصی ٹیم تشکیل دیتے ہوئے واردات میں ملوث ملز م کا سراغ لگا کر جلد از جلد گرفتار کرنے کا ٹاسک حوالہ کیا، ایس ایچ او تھانہ متنی سید رسول نے دیگر تفتیشی ٹیم کے ہمراہ جدید سائنسی خطوط پر تفیش کو جاری رکھتے ہوئے مقتول کے قریبی رشتہ داروں اور دیگر دوستوں کوبھی شامل تفتیش کرتے ہوئے ان کے بیانات قلمبند کئے ، جاری تفتیش کے دوران مقتول کے چچا زاد بھائی محمد خان ولد رسول خان کے بیانات میں بار بار تبدیلی اور موبائل ڈیٹا کے تناظر میں اسے پولیس تحویل میں لینے اور انٹاروگیٹ کرنے کا فیصلہ کیا گیا جس کے دوران ملزم محمد خان نے مقتول کی جانب سے مستورات کے تنازعہ پر اسے زہریلی دوائی دینے اور اسے جسمانی طور پر ناکارہ بنانے کی کوشش کرنے پر مقتول محمد امین کو قتل کرنے کا انکشاف کیا، ملزم محمد خان کی نشاندہی پر اس کے قبضہ سے آلہ قتل کلہاڑی بھی برآمد کر لی گئی ہے جس سے مزید تفتیش جاری ہے 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -