ناقص میٹریل کا استعمال، پنجاب  کے 9ریجن کی سڑکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار 

  ناقص میٹریل کا استعمال، پنجاب  کے 9ریجن کی سڑکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار 

  

 لاہور(ارشد محمود گھمن)پنجاب کے 9ریجن کی سٹرکیں ٹوٹ پھوٹ کاشکارہوگئیں،حالیہ بارشوں نے محکمہ سی اینڈ ڈبلیو کے اعلیٰ افسران کی جانب سے ناقص میٹریل کے استعمال کاپول کھول دیا گزشتہ دو سال قبل حکومت کی طرف سے دیئے گئے کھربوں روپے کے ترقیاتی فنڈز کی چلنے والی انکوائریاں بھی ردی کی ٹوکری کی زینت بننے کی وجہ سے قومی خزانہ کو اربوں کو نقصان تفصیلات کے مطابق سابق اور موجودہ دور حکومت کے دوران محکمہ سی اینڈ ڈبلیو کو صوبائی دارالحکومت سمیت پنجاب بھر کے 9ریجن نارتھ، ساؤتھ اورایم اینڈ آر ہائی وے ڈویژن میں وزراء اور ارکان قومی وصوبائی اسمبلی کی درخواست پر سٹرکوں کی تعمیرومرمت کیلئے تقریباً 2کھرب روپے کے منصوبے جن میں جی ٹی روڈ وغیرہ بھی شامل ہیں کے فنڈز جاری کئے گئے جس میں چیف انجینئر سنٹرل زون لاہوروسیم طارق،چیف انجینئر نارتھ شفقت بٹر،چیف انجینئر ساؤتھ نیئر سعید،چیف انجینئر ایم اینڈ آر ہائی وے اقبال اعوان اور ندیم الدین وغیرہ نے اپنے ایس ای،ایگزیکٹو انجینئر وغیرہ اور ارکان اسمبلی سمیت ٹھیکیداروں کی مبینہ ملی بھگت سے پتھر،لک اوربجری کاناقص میٹریل استعمال کیا جس کا بھانڈا ہونیوالی حالیہ بارشوں نے کھول دیا ذرائع کے مطابق سی اینڈ ڈبلیو کے افسران نے دوران ٹینڈر ٹھیکیداروں سے 10فیصد کمیشن وصول کرکے الاٹ کئے،بعدازاں ایس ای اور ماتحت عملہ نے سٹرکوں کی انسپکشن کے دوران بھی ٹھیکیداروں سے 10فیصد کمیشن وصول کرکے بل پاس کئے جو کہ ٹھیکیداروں نے مذکورہ افسروں کو 20فیصد کمیشن دے کر ناقص میٹریل کا استعمال کیا جس کی وجہ سے ہونے والی بارشوں کی وجہ سے سٹرکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکارہوگئی ہیں اور قومی خزانہ کو اربوں روپے کا نقصان اٹھانا پڑاہے یادرہے کہ محکمہ سی اینڈ ڈبلیو کے مذکورہ افسروں کے خلاف ناقص میٹریل اور بوگس ادائیگیوں پر محکمہ اینٹی کرپشن،نیب اور چیف منسٹر انسپکشن ٹیم (سی ایم آئی ٹی) نے انکوائریاں شروع کررکھی ہیں ذرائع کے مطابق مذکورہ افسروں نے چلنے والی انکوائریوں کو ان محکموں کے انوسٹی گیشن آفیسرز کے ساتھ مبینہ ملی بھگت کرتے ہوئے ردی کی ٹوکری کی زینت کروارکھی ہیں جبکہ کئی افسران قومی خزانہ کے اربوں روپے لوٹ کر انکوائریوں کے باوجود ریٹائرمنٹ حاصل کرکے کروڑوں روپے پنشن بھی وصول کرچکے ہیں اس حوالے سے سیکرٹری سی اینڈ ڈبلیو کیپٹن (ر)محمد اسد کا کہناہے کہ حالیہ بارشوں کے دوران ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہونے والی سٹرکوں کے ذمہ دار افسروں کیخلاف کارروائی کی جائیگی اور ٹھیکیداروں سے دوبارہ ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہونیوالی سٹرکوں کی مرمت کرائی جائے گی۔

ٹوٹی سڑکیں 

مزید :

صفحہ آخر -