کیا آپ کو معلوم ہے کہ فرنچ ٹوسٹ کس ملک کی ایجاد ہے ؟

کیا آپ کو معلوم ہے کہ فرنچ ٹوسٹ کس ملک کی ایجاد ہے ؟
کیا آپ کو معلوم ہے کہ فرنچ ٹوسٹ کس ملک کی ایجاد ہے ؟

  


لاہور (نیوزڈیسک) فرنچ ٹوسٹ بچوں اور بڑوں کی پسندیدہ غذا ہے اور اسے ساری دنیا میں ہی مقبولیت حاصل ہے۔ آج اگرچہ دنیا اسے فرانس کے نام سے منسوب کرتی ہے لیکن تاریخ دانوں کا کہنا ہے کہ درحقیقت اس کی ایجاد کا سہرا فرانس کے سر نہیں بلکہ یہ تو فرانس کے وجود میں آنے سے بھی پہلے مرغوب غذا کے طور پر مشہور تھی۔

بھارت میں غربت کی انتہاء،پڑھے لکھے ناکام چور کا دل دہلا دینے والا خط

چوتھی صدی عیسوی کے روم میں لوگ باسی بریڈ کو ضائع کرنے کی بجائے اسے دودھ اور انڈے میں بھگو کر تیل یا مکھن میں فرائی کر کے کھاتے تھے۔ اس کا ذکر مصنف ایبیسٹیس کی کتاب میں بھی ملتا ہے۔ اٹلی کے بعد یہ باقی یورپ میں بھی مقبول ہو گئی۔ اس مشہور غذا کو فرینچ ٹوسٹ کا نام غالباً امریکیوں نے دیا ہے جیسا کہ آلو کے چپس کو بھی فرینچ فرائی کا نام غلط طور پر انہیں نے دیا۔ ان دونوں غلطیوں کی وجہ یہی ہے کہ امریکہ میں یہ غذائیں فرانسیسی تارکین وطن نے متعارف کروائیں اور امریکی یہ سمجھنے لگے کہ یہ فرانس کی ایجاد ہیں۔ اگرچہ فرینچ ٹوسٹ کے آغاز کو 2,000 سال سے زائد کا عرصہ ہو چکا ہے لیکن آج بھی اسے بنانے کا طریقہ تقریباً ساری دنیا میں وہی ہے جیسا کہ اس کے آغاز میں تھا۔

اس فلم کا ٹریلر جو ہیکرز نہیں چاہتے آپ دیکھیں

مزید : ڈیلی بائیٹس