اسلامی نظریہ کونسل خواجہ سراؤں کے حقوق ، خواتین کو با اختیار کرنے کے حوالے سے کام کر رہی ہے : چیئر مین

اسلامی نظریہ کونسل خواجہ سراؤں کے حقوق ، خواتین کو با اختیار کرنے کے حوالے ...

  

اسلام آباد ( آئی این پی ) چیئرمین اسلامی نظریہ کونسل ڈاکٹر قبلہ ایازنے کہا ہے کہ کونسل پارلیمنٹ کے ساتھ خوا جہ سراوں کے حقوق، خود کشی کے اقدام سے متعلق اقدام ،خواتین کو بااختیار کرنے کے لیے اسلامی نظام کیا ہوسکتا ہے اکے بارے میں مل کر کام کر رہی ہے اسلامی نظر یہ کونسل قانون سازی کے ساتھ معاشرے کے ساتھ بھی اپنے روابط مضبوط کرنا چاہتی ہے اور پارلیمانی نمائندگان کے ساتھ لابنگ اور تعامل کے ذریعے آگے بڑھنے کی کوشش کر رہی ہے۔ا سلامی نظریہ کونسل کے زیراہتمام توسیعی خطبہ ’’پاکستان میں انتخابی قوانین کی قانونی تاریخ اور ان میں ترمیمات کا جائزہ‘‘ اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے ڈاکٹر قبلہ ایاز نے کہا کہ جمہوریت ہی آج کے دور میں ترقی کے لیے بہترین نظام ہے دنیا کے مزاج اور شعور نے اسی کو تاحال قبول کر لیا ہے۔ غیر جمہوری اور غیر آئینی طریقے عوامی مشکلات اور سیاسی عدم استحکام کا باعث بنتے ہیں۔جمہوریت ہی ہمارے لیے بہترین راستہ اور نظام ہے غیر جمہوری راستے نقصان کی طرف لیجاتے ہیں جمہوری نظام کا موازنہ شریعت کیساتھ کریں گے تو ہمار ی رہنمائی ہمارے علما کرتے ہیں جمہوری عمل کے نتیجے میں اللہ پاک نے یہ خوبصورت پاکستان دیابہت جلد 22 نکات پر بھی سیمینار کرنے جارہے ہیں جمہوری راستے ہمارے لیے بہترین ہیںآئین میں یہ ترامیم جمہوری رویوں سے ہی ممکن ہوسکی ہیں کونسل کو زیادہ فعال بنانے کے لیے بھی کوشش کررہے ہیں۔ بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی، اسلام آباد کے شعبہ لاء و شریعہ کے پروفیسر ڈاکٹر محمد مشتاق احمد نے انتخابی قوانین کی قانونی تاریخ، اس تمام عرصہ میں ہونے والے انتخابات کا طائرانہ جائزہ، آئینی ترامیم کے پیش نظر انتخابی نظام پر مرتب ہونے والے اثرات، وقتاً فوقتاً انتخابات کے لیے بننے والے قوانین کا تعارف، لوکل باڈیز اور لوکل گورنمنٹ کے نظام، وفاقی اور پارلیمانی طرز حکومت پر تفصیلی روشنی ڈالی۔انتخابات قانون، 2017ء کا تفصیلی تعارف کرواتے ہوئے کہا کہ یہ ختم نبوت والے حساس مسئلہ کے علاوہ دیگر متعدد خصوصیات کا حامل ہے اور اس کے ذریعے متعدد دیگر انتخابی قوانین کو یکجا کر کے اسے ایک جامع قانون کی شکل دے دی گئی ہے۔ ختم نبوت کے حلف نامے کے معاملے کو دو ترامیم کے ذریعے بطریق احسن حل کر دیا گیا ہے اور اب اس حوالے سے مزید بحث کی ضرورت نہیں ۔

مزید :

علاقائی -