جنوری حکمرانوں پر بھاری، پنجاب میں اپوزیشن متحد ہے: محمود الرشید

جنوری حکمرانوں پر بھاری، پنجاب میں اپوزیشن متحد ہے: محمود الرشید

لاہور (نمائندہ خصوصی ) اپوزیشن لیڈر میاں محمودالرشیدنے پنجاب اسمبلی اجلاس کی کارروائی وزیراعلیٰ شہباز شریف کی شرکت سے مشروط کردی،وزیراعلیٰ سے نواز شریف کی جانب سے شروع کی جانیوالی تحریک عدل اور سانحہ ماڈل ٹاؤن پر اپنی پوزیشن واضح کرنے کا مطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روزپنجاب پبلک سیکرٹریٹ میں اپوزیشن لیڈر نے صحافیوں سے غیر رسمی بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت مسائل کے آگے کبوتر کی طرح آنکھیں بند کئے ہوئے ہے، پنجاب اسمبلی اجلاس بلانے میں پنجاب حکومت جان بوجھ کر تاخیر کر رہی ہے، وہ نہیں چاہتی کہ کمپنیز سکینڈل، ختم نبوت، نام نہاد تحریک عدل، حکمران جماعت کی نااہلی سمیت اہم صوبائی امور پر اپوزیشن کو جواب دے، حکومت کی ٹائم ٹپاؤ پالیسی نے پہلے ہی ملک کو سکیورٹی رسک بنا رکھا ہے، انکا کہنا تھا کہ پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن متحد ہے، آئندہ ہفتے پیپلز پارٹی، مسلم لیگ قائداعظم، جماعت اسلامی کے پارلیمانی لیڈرز کوآئندہ اجلاس کے حوالے سے مشترکہ حکمت عملی طے کرنے کیلئے بلا رکھا ہے، وزیراعلیٰ شہباز شریف نے ختم نبوت، سانحہ ماڈل ٹاؤن،کمپنیز سیکنڈل اور تحریک عدل کی وضاحت نہ کی تو اجلاس نہیں چلنے دیں گے۔انہوں نے مزیدکہا کہ ختم نبوت کے خلاف سازشی گروہ کا کاؤنٹ ڈاؤن شروع ہو گیا جنوری حکمرانوں پر بھاری ہے، وقت آ گیا ہے قوم خونیں انقلاب کے دعویدار جعلی خادموں کا محاسبہ کرے۔

مزید : صفحہ آخر