کلبھوشن یادیو سے اہلیہ اور والدہ کی ملاقات کے تنازع پر بھارتی پارلیمنٹ میں ہنگامہ

کلبھوشن یادیو سے اہلیہ اور والدہ کی ملاقات کے تنازع پر بھارتی پارلیمنٹ میں ...

  

نئی دہلی (صباح نیوز)حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کے سینئر رکن پارلیمان اور سابق مرکزی وزیر سبھرامنیم سوامی نے پاکستان کیخلاف ہرزہ سرائی کرتے ہوئے کہا ہے پاکستان سے جنگ ناگزیر ہے اور اس کے چار ٹکڑے کر دینے چاہییں۔پاکستان میں جاسوسی کے جرم میں پھانسی کی سزا پانیوالے را کے ایجنٹ کلبھوشن یادیو سے ان کی اہلیہ اور والدہ کی ملاقات کے تنازعے پر پارلیمینٹ میں ہنگامے کے بعد ایوان سے باہر نامہ نگاروں سے گفتگو میں سبھرامنیم سوامی نے کلبھوشن کی اہلیہ کے گلے سے منگل سوتر اتروانے کو ہندووں کی مقدس کتاب 'مہا بھا ر ت' میں ایک اہم کردار دروپدی کو بے لباس کرنے سے تعبیر کیا اور کہا اس’مذہبی توہین‘کا واحد حل جنگ ہے۔میں پہلے سے کہتا رہا ہوں انڈ یا پاکستان سے جنگ کی تیاری کرے، سبھرامنیم سوامی اس سے پہلے بھی پاکستان کیخلاف اشتعال انگیز بیانات دے چکے ہیں، قبل ازیں لو ک سبھا یعنی ایوان زیریں میں حزب اختلاف کے رہنما ملیکا ارجن کھڑگے نے کلبھوشن کا سوال اٹھاتے ہوئے کہا پاکستانی حکام نے کلبھوشن کی اہلیہ اور والدہ کیساتھ جس طرح کا 'غیر انسانی' برتاؤ کیا ہے اس کی پورا ایوان مذمت کرتا ہے۔انھوں نے حکومت سے در خو ا ست کی کہ اس معاملے پر پارلیمینٹ میں بحث ہونی چاہیے۔ انھوں نے حکومت پر زور دیا کہ وہ کلبھوشن کو بحفاظت ملک واپس لانے کی کو شش کرے۔وزیر خارجہ سشما سوراج نے ایوان کو یقین دلایا کہ وہ آج یعنی جمعرات کو پارلیمینٹ میں اس سوال پر ایک مفصل بیان دیں گی۔اس دوران علاقائی جماعت سماجوادی پارٹی کے سینئررکن پارلیمان نریش اگروال کے اس بیان پر زبردست ہنگامہ ہوگیا کہ 'کلبھوشن یادیو کو پاکستان دہشت گرد مانتا ہے اور وہ ان کیساتھ اسی طرح سے پیش آ رہا ہے۔ ہم بھی اپنے ملک میں دہشت گردوں سے اسی طرح پیش آتے ہیں اور سختی سے پیش بھی آنا چاہیے۔ پاکستان کی جیلوں میں سینکڑوں انڈین بند ہیں، میری سمجھ میں نہیں آرہا میڈیا صرف کلبھوشن یادیو کی ہی بات کیوں کر رہا ہے،نریش اگروال کے اس بیان پر ان کی اپنی جماعت نے لاتعلقی کا اظہار کیا اور کہا قومی سلامتی کے سوال پر وہ حکومت کیساتھ ہے۔بی جے پی کے سینئروزیر راج سنگھ نے نریش اگروال سے بیان پر پورے ملک سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیاہے ۔

بھارتی پارلیمنٹ ہنگامہ

اسلام آباد (این این آئی)پاکستان نے سزا یافتہ بھارتی جاسوس کمانڈر کلبھوشن یادیو کی اہلیہ اور والدہ کے دورے کے 24 گھنٹے بعد عائد کردہ بے بنیاد بھارتی الزام کو مستر کردیا ۔ ترجمان دفتر خارجہ کی جانب سے بدھ کو جاری بیان میں کہاگیا ہے کہ ہم الفاظ کی بے معنی جنگ میں الجھنا نہیں چاہتے۔ ہماری شفافیت اور فراخ دلی ان الزامات کو جھٹلاتے ہیں۔بیان میں کہاگیا کہ اگر بھارتی خدشات سنجیدہ تھے تو مہمان یا بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر انہیں دورے کے دوران میڈیا کے سامنے اٹھاتے جو فوری دستیاب تھا جیسا کہ بھارت نے درخواست کی تھی ۔ ترجمان نے کہاکہ حقیقت یہ ہے کہ کمانڈر کلبھویشن یادیو کی والدہ نے انسانی ہمدردی کے جذبے پر پاکستان کا سرعام شکریہ ادا کیا اسے میڈیا نے بھی ریکارڈ کیا ، اس حوالے سے مزید کچھ کہنے کی ضرورت نہیں ہے۔

پاکستان

مزید :

صفحہ اول -