ہم نے کبھی وہ این آر او نہیں کیا جو پیپلزپارٹی نے کیا تھا،طاہر القادری اے پی سی کو دھرنے کے بجائے قومی یکجہتی کی اے پی سی بنائیں، احسن اقبال

ہم نے کبھی وہ این آر او نہیں کیا جو پیپلزپارٹی نے کیا تھا،طاہر القادری اے پی ...
ہم نے کبھی وہ این آر او نہیں کیا جو پیپلزپارٹی نے کیا تھا،طاہر القادری اے پی سی کو دھرنے کے بجائے قومی یکجہتی کی اے پی سی بنائیں، احسن اقبال

  


کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ ہم نے کبھی وہ این آر او نہیں کیا جو پیپلزپارٹی نے کیاتھا ،طاہر القادری اے پی سی کو دھرنے کے بجائے قومی یکجہتی کی اے پی سی بنائیں،کوئٹہ میں پاسپورٹ آفس کا افتتاح کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال نے کہا کہ ہمسایہ ملک سی پیک کو ناکام بناناچاہتاہے،کلبھوشن نے اعتراف کیاکہ سی پیک کوناکام بنانے کیلئے بھارت کروڑوں ڈالراستعمال کررہاہے،ان کا کہناتھا کہ کوئٹہ چرچ جیسے واقعات سرحد بار سے دراندازی سے کئے جاتے ہیں ،بھارت ہمارے ملک میں انتشار پھیلانا چاہتا ہے ،وفاقی وزیر داخلہ نے کہا کہ ہماراہمسایہ ملک بھارت افغانستان کی سرزمین استعمال کرکے سی پیک کوناکام بناناچاہتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارا مقابلہ بھارت اور دیگر ملکوں سے معیشت کے شعبے میں ہے،معیشت مضبوط ہوگی تو کوئی ملک میلی نگاہ سے نہیں دیکھ سکتا،سیاسی استحکام ملکی ترقی کیلئے آکسیجن کی طرح ضروری ہے،ایک دوسرے کی ٹانگ کھینچا ملک کو ڈبودیتاہے ،پارلیمنٹ کی مدت مکمل ہونے پر دوسرا سنگ میل عبور کریں گے ،وفاقی وزیر داخلہ نے کہا کہ پاکستان کو مضبوط کرنے میں استحکام رکھنا ہے اور اس کیلئے کام کرنا ہے، 2013میں دہشتگردی اس قدر تھی کہ بلوچستان،کراچی کی شاہراہیں غیرمحفوظ تھیں ،4سال بعد بلوچستان سے اغوابرائے تاوان کی آوازیں نہیں سنی،گوادر سے کراچی اور دیگر شاہراہوں پر لوگ بلا خوف سفر کرتے ہیں۔

وفاقی وزیر داخلہ نے کہا کہ خضدارمیں ویمن یونی ورسٹی کیمپس بنایاجائے گا اوروڈھ میں بھی ویمن یونی ورسٹی کیمپس قائم کیاجائے گا، 2دن میں بلوچستان میں4 یونیورسٹی کیمپسز کا افتتاح بھی کروں گا،احسن اقبال نے کہا کہ ماضی میں رہ جانے والی بلوچستان کی ترقی کی کمی کو پورا کیا جاسکے،انہوں نے کہا کہ کوئٹہ ایگزیکٹو پاسپورٹ آفس میں جدید ترین سہولتیں دی گئی ہیں اوریہ جدید بین الاقوامی معیارکاپاسپورٹ آفس ہے ،انہوں نے کہا کہ کوئٹہ ایگزیکٹو پاسپورٹ آفس بلوچستان کاپہلاپاسپورٹ آفس ہے جو 4 مہینے کی ریکارڈ مدت میں مکمل کیا گیا اور ایک پاسپورٹ کی تیاری میں 20سے 25 منٹ لگیں گے،انہوں نے کہا کہ کوئٹہ ایگزیکٹو پاسپورٹ آفس میں بیک وقت80افرادکوسروس دی جاسکے گی،کوئٹہ ایگزیکٹو پاسپورٹ آفس کی تعمیر پر 1کروڑ 80لاکھ روپے لاگت آئی۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : اہم خبریں /قومی