”تم لوگوں کی جرات کیسے ہوئی ہماری خواتین کو بلا کر ان کا منگل ستر۔۔۔“ بھارتی ریٹائرڈ میجر نے لائیو ٹی وی شو میں انتہائی بدتمیزی سے بات کی تو پاکستانی دفاعی تجزیہ نگار قمر چیمہ نے بھی ”کمال“ کر دیا، ویڈیو نے سوشل میڈیا پر دھوم مچا دی

”تم لوگوں کی جرات کیسے ہوئی ہماری خواتین کو بلا کر ان کا منگل ستر۔۔۔“ بھارتی ...
”تم لوگوں کی جرات کیسے ہوئی ہماری خواتین کو بلا کر ان کا منگل ستر۔۔۔“ بھارتی ریٹائرڈ میجر نے لائیو ٹی وی شو میں انتہائی بدتمیزی سے بات کی تو پاکستانی دفاعی تجزیہ نگار قمر چیمہ نے بھی ”کمال“ کر دیا، ویڈیو نے سوشل میڈیا پر دھوم مچا دی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان نے انسانی ہمدردی کی بنیاد پر کلبھوشن کی والدہ اور اہلیہ سے ملاقات کیا کروائی، بھارتی میڈیا آپے سے ہی باہر ہو گیا ہے اور پاکستان کے بڑے پن کو تسلیم کرنے کے بجائے ایسے ایسے الزامات لگا رہا ہے کہ پوری دنیا دنگ رہ گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”کیا تمہیں یہ نکاح قبول ہے۔۔۔؟“ نکاح خواں کے تیسری مرتبہ پوچھنے پر دولہا نے ایسی جگت مار دی کو نکاح خواں غصے سے لال پیلا ہو گیا، ویڈیو نے سوشل میڈیا پر دھوم مچا دی

اس ملاقات کے بعد بھارت کے کئی ٹاک شوز نے پاکستانی صحافیوں و دفاعی تجزیہ کاروں کو بھی شرکت کی دعوت دی اور پھر ان کیساتھ انتہائی بدتمیزی سے گفتگو کرتے ہوئے الزامات کی بوچھاڑ کی گئی۔ ایسا ہی کچھ پاکستانی دفاعی تجزیہ کار قمر چیمہ کیساتھ بھی کیا گیا تاہم وہ تن تنہاءہی تین بھارتی ’سورماﺅں‘ کیساتھ نبردآزما رہے۔

پروگرام کی خاتون میزبان نے گفتگو کا آغاز کرتے ہی غیر سلیقہ مندی کا طعنہ دیدیا جس پر قمر چیمہ نے جواب دیا کہ ہم نے ایک جاسوس اور مجرم کو فیملی سے ملاقات کی اجازت دی ، کیا یہ سلیقہ نہیں ہے؟ آپ کو کس طرح کا سلیقہ چاہئے؟ کیا کسی قانون کے تحت ہم مجبور تھے کہ اسے ملاقات کی اجازت دیتے؟

میزبان نے کہا کہ اگر آپ سفارتکاری پر یقین نہیں رکھتے تو کیا آپ کو یہ بھی معلوم نہیں کہ کسی عورت کیساتھ کیسا سلوک کرتے ہیں؟ قمر چیمہ نے پہلے تو یہ پوچھا کہ اس میں سفارتکاری کدھر ہے؟ تاہم خاتون میزبان اپنے موقف پر اڑی رہی اور پاکستان کے روئیے کو ہی قابل نفرت قرار دیدیا۔

اس پر قمر چیمہ بھی کچھ سیخ پا ہوئے اور کہا کہ ”میرے خیال سے ہمیں یہ ملاقات کرانی ہی نہیں چاہئے تھی، کیونکہ آپ یہ ملاقات نہیں چاہتے تھے، آپ مخالفانہ ماحول بنانا چاہتے ہیں، میڈیا کو اس معاملے پر تعمیری کردار ادا کرنے کی ضرورت تھی لیکن ایسا کرنے کے بجائے مخالفانہ فضاءقائم کی جا رہی ہے تاکہ دونوں ممالک کی عوام قریب نہ آ سکیں۔“

اس معاملہ اس وقت شروع ہوا جب خاتون میزبان نے اپنے پروگرام میں شریک بھارتی میجر جنرل (ر) سنہا کو بولنے کی دعوت دی اور جب انہوں نے بولنا شروع کیا تو چھپر پھاڑ کر ہی بولے اور انتہائی بدتمیزی سے قمر چیمہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ”آپ انسانی اقدار سے کہیں دور چلے گئے، آپ نے پوری دنیا میں خاتون کو بے عزت کیا ہے۔ آپ نے ہماری ثقافت کی تذلیل کی ہے۔ آپ نے ہماری دو خواتین کو بلایا تو پھر یہ جرات کیسے کی کہ انہیں کپڑے بدلنے کہا۔

آپ کی جرات کیسے ہوئی کہ ان سے بندی ہٹانے کو کہا، آپ کی جرات کیسے ہوئی کہ انہیں چوڑیاں اتارنے کو کہا، منگل سترا اتارنے کو کہا، کیا آپ جانتے ہیں کہ بھارتی ثقافت میں منگل سترا کی اہمیت کیا ہے؟ آپ نے اس کی چپل تک واپس نہ کی، آپ ایک چپل چور ملک ہیں۔ اتنا نیچے مت گریں۔“

بھارتی ریٹائرڈ میجر نے اپنی گفتگو کے دوران جب بھارتی ثقافت کی بات کی تو قمر چیمہ نے بھی بے اختیار کہا کہ ”آپ کی ثقافت کیا ہے؟ پاکستان میں جاسوس بھیجنا تمہاری ثقافت ہے، پاکستان میں مجرم بھیجنا تمہاری ثقافت ہے، اپنے حاضر سروس فوجی کو پاکستان میں بھیج کر انسفراسٹرکچر تباہ کرنا اور ہمارے لوگوں کو مارنا آپ کی ثقافت ہے؟“

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”سدھر جاﺅ اور کلبھوشن کو چھوڑ دو ورنہ مٹ جاﺅ گے۔۔۔“ بھارتی نے لائیو پروگرام میں یہ بات کہی تو طارق پیرزادہ نے زبردست جواب دے کر اس کا منہ بند کر دیا، ویڈیو نے سوشل میڈیا پر دھوم مچا دی

اس کیساتھ ہی انہوں نے تالیاں بجا کر طنزیہ انداز میں کہا کہ واہ کیا ثقافت ہے آپ کی؟لیکن پاکستان کی ثقافت یہ ہے کہ ہم نے ایک جاسوس، مجرم اور قاتل کو انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر اس کی والدہ اور اہلیہ سے ملاقات کرنے کی اجازت دی۔ جب ریٹائرڈ میجر کی بدتمیزی حد سے زیادہ بڑھ گئی تو قمر چیمہ نے کہا کہ میں جانتا ہوں کہ آپ بھارتی ہیں اس لئے عام سے انداز سے جواب دینے کا کوئی فائدہ نہیں ہو گا، مجھے یہ بھی پتہ ہے کہ آپ کو سلیقے سے متعلق کافی مسائل ہیں۔

ریٹائرڈ میجر نے یہ اعتراض بھی اٹھایا کہ انہیں قاتل کی ماں اور قاتل کی بیوی کیوں کہا گیا؟ جس پر قمر چیمہ نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ ”تو وہ اور کیا ہے؟ اب تم لوگ ایک کہانی بنانے کی کوشش کر رہے ہو، کم از کم تمہارے میڈیا کی اصل ذمہ داری یہی ہے کہ امن کے ماحول کو تباہ کیا جائے۔“

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -علاقائی -پنجاب -لاہور -