سموگ کے خاتمے کیلئے اقدامات کیے جا رہے ہیں،پرویزالٰہی 

 سموگ کے خاتمے کیلئے اقدامات کیے جا رہے ہیں،پرویزالٰہی 

  



 لاہور (آن لائن) سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ سموگ کے خاتمے کیلئے اقدامات کیے جا رہے ہیں، بطور وزیراعلیٰ پنجاب ویژن 2020 کے تحت پنجاب کی تاریخ میں پہلی بار ماحول کی بہتری کیلئے 200 ملین کا اضافہ کیا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان مسلم لیگ کے تحت ہونے والی پہلی ماحولیاتی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر صدر پلڈاٹ احمد بلال محبوب اور رضوان ممتاز علی سربراہ مسلم لیگ ریپیڈ ونگ نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر کامل علی آغا، خدیجہ فاروقی، ڈاکٹر زین بھٹی، احمد فاران خان، مظہر علی لغاری، آمنہ الفت سمیت دیگر شخصیات موجود تھیں۔ چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ پنجاب کی ترقی کیلئے دن رات کام کر کے صوبے کو سرپلس بنایا تھا مگر شہبازشریف کی نااہلی کی وجہ سے میرے دور کا سرپلس صوبہ 2 ہزار ارب کا مقروض ہو گیا، اب صوبے کو ٹھیک کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے اس میں وقت لگے گا، موسمی ماحول ٹھیک کرنے کے ساتھ ساتھ سیاسی ماحول بھی ٹھیک کرنے کی ضرورت ہے۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے مزید کہا کہ میں نے اپنے دورِ وزارتِ اعلیٰ میں اپنے ویژن 2020 پروگرام کے تحت پنجاب کی تاریخ میں پہلی دفعہ مضر ماحولیاتی اثرات کے تدارک کیلئے باتیں نہیں کام کر کے دکھایا، میں نے Municipal Waste, Solid Waste, Industrial Waste اور ٹرانسپورٹ کی وجہ سے ماحول میں پیدا ہونے والی زہریلے اثرات کے خاتمہ کیلئے عملی اور دوررس اقدامات کیے۔ جن کا مقصد پنجاب کے ماحولیات کی حفاظت بحالی اور بہتری تھا۔ انہوں نے کہا کہ حال ہی میں میرے پاس پاکستان میں موجود ایک کورین کمپنی کے سربراہ پنجاب میں سموگ کے خاتمہ کا ایک منصوبہ لے کر آئے ہیں۔ اس منصوبے کے مطابق کسانوں کوفصل کاٹنے کے بعد جو مڈھ رہ جاتے ہیں انہیں جلانے کی ضرورت نہیں ہوگی اور یہ کمپنی کسانوں کو مڈھ نہ جلانے پر الٹا معاوضہ دے گی۔

پرویزالٰہی

مزید : صفحہ آخر