ٹول پلازہ عملے کی غنڈہ گردی، تشدد 4سالہ بچہ جاں بحق 

  ٹول پلازہ عملے کی غنڈہ گردی، تشدد 4سالہ بچہ جاں بحق 

  



مریدکے(نامہ نگار)نارووال روڈ پر ٹول پلازہ عملہ کی غنڈہ گردی کے باعث چار سالہ بچہ جاں بحق ہو گیا۔ نواحی گاؤں ٹپیالہ دوست محمد کا خاندان چار سالہ بچے کو تشویشناک حالت میں تحصیل ہیڈ کوارٹرز ہسپتال مریدکے لے کر جا رہا تھا کہ ٹول ٹیکس عملہ نے ایک گھنٹہ تک کار کو روک کر گیارہ گناتاوان کا مطالبہ کیا۔ بچے کی موت کی اطلاع پر ٹیکس پلازہ عملہ نے مظلوم خاندان کے خلاف ڈکیتی کی درخواست جمع کرا دی۔ پولیس نے مظلوم خاندان کی داد رسی کے بجائے درخواست لے کرا ٓنے والوں کو حوالات میں بند کرنے کی دھمکی دے کر تھانہ سے بھگا دیا۔ با اثر افراد نے دھمکیاں دے کر مظلوم خاندان کو خاموش کرا دیا۔ بتایا گیا ہے کہ نواحی علاقہ ٹپیالہ دوست محمد کا رہائشی عبد المجید راولپنڈی میں محنت مزدوری کرتا ہے۔ عبد المجید کے چار سالہ بیٹے احمد کی طبیعت اچانک بگڑ گئی جس پر ہمسائے کاشف نے خدا ترسی کرتے ہوئے صبح  7بجے اسے اپنی کار میں سوار کرکے تحصیل ہیڈ کوارٹرز ہسپتال مریدکے پہنچانے کی کوشش کی۔ مریدکے نارووال روڈ پر قائم نئے ٹال پلازہ کے عملہ نے مبینہ طو ر پر زائد ٹیکس کی وصولی کا مطالبہ کیا مگر کار ڈرائیور نے ایمر جنسی کے باعث ٹیکس کی رقم پھینکی اور گاڑی چلا دی۔ ٹیکس عملہ کے پانچ افراد نے تعاقب کرکے ان کی کار کو روک لیا اور ڈرائیور سمیت دیگر افراد کو مبینہ طور پر تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد آدھ گھنٹہ تک روکے رکھا اور گیارہ گنا تاوان کا مطالبہ کیا۔ اسی دوران مقامی افراد کے جمع ہونے پر ٹیکس عملہ فرار ہو گیا۔ چار سالہ احمد کو تحصیل ہیڈ کوارٹرز ہسپتال مریدکے پہنچایا گیا تو فوری طبی امداد نہ ملنے کے باعث وہ انتقال کر گیا۔ کاشف نامی شخص نے ٹیکس عملہ کے خلاف کارروائی کے لیے تھانہ صدر مریدکے میں درخواست جمع کرانا چاہی تو منشی نے درخواست دہندہ کو ہی حوالات میں بند کرنے کی دھمکی دے کر بھگا دیا۔ متاثرین کے مطابق پولیس نے با اثر مقامی افراد کے ذریعے انہیں خاموش رہنے پر مجبور کر دیا ہے۔د وسری طرف پولیس نے ٹال ٹیکس عملہ کی طرف سے کار سواروں پر ڈکیتی کی واردات کے دوران ہزاروں روپے چھیننے کے الزام میں درخواست وصول کر لی ہے۔ متاثرہ خاندان نے ڈی پی او شیخوپورہ اور چیئرمین پنجاب ہائی وے ڈیپارٹمنٹ سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔پولیس کے مطابق انہوں نے کسی کو حوالات میں بند کرنے کی دھمکی نہیں دی اور نہ ہی انہیں کوئی درخواست جمع کرائی گئی ہے۔

بچہ جاں بحق

مزید : صفحہ آخر