جاپان، 10برس بعد پہلے غیر ملکی کو تختہ دار پر لٹکا دیا گیا

جاپان، 10برس بعد پہلے غیر ملکی کو تختہ دار پر لٹکا دیا گیا

  



ٹوکیو(آئی این پی)جاپان نے 10برس کے بعد پہلے غیر ملکی کو تختہ دار پر لٹکا دیا،  40 سالہ وای وای فوکو ایک حراستی مرکز میں پھانسی دے کر لاش سمندر برد کردی گئی ہے،چین سے تعلق رکھنے والے شخص پر 4افراد کے قتل اور ڈکیتی کا جرم ثابت ہوا تھا۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق جاپان نے گزشتہ 10 برس میں پہلے غیرملکی کو پھانسی دے دی ہے۔مذکورہ شخص  کا تعلق چین سے تھا۔ 40 سالہ وای وای فوکو ایک حراستی مرکز میں پھانسی دے دی گئی۔ چین سے تعلق رکھنے والے شخص پر 2003میں 4 افراد کے کنبہ کے قتل اور ڈکیتی کا جرم تھا۔جاپانی وزیر انصاف ماساکو موری نے بتایا کہ 40 سالہ وای وای فوکو ایک حراستی مرکز میں پھانسی دے دی گئی۔انہوں نے بتایا کہ چینی باشندے کی سزا گزشتہ 16 سال سے زیر التوا تھی۔خیال رہے کہ چینی باشندے وای وای پر فوکوکا میں واقع ایک گھر میں کپڑوں کی دکان کے مالک اور ان کی اہلیہ سمیت دو بچوں کو لوٹنے کے بعد قتل کرنے کا جرم تھا۔جاپان کے وزیر انصاف نے نیوز کانفرنس میں کہا کہ وای وای اور دو چینی ساتھیوں کی لاشوں کے ساتھ بھاری وزن باندھ کر سمندر میں پھینک دی گئی۔واضح رہے کہ مرکزی مجرم کے دیگر دو ساتھیوں کا ٹرائل چین میں ہوا تھا جس میں ایک کو عمر قید اور دوسرے کو سزائے موت سنائی گئی تھی۔

مزید : عالمی منظر


loading...