پی اے سی ذیلی کمیٹی کا ہسپتالوں میں غیر معیاری ادویات کے استعمال پراظہار تشویش

پی اے سی ذیلی کمیٹی کا ہسپتالوں میں غیر معیاری ادویات کے استعمال پراظہار ...

  



اسلام آباد(آن لائن) پبلک اکاؤنٹس کی ذیلی کمیٹی نے وفاقی دارالحکومت کے ہسپتالوں اور میڈیکل سٹوروں میں غیر معیاری ادویات کے استعمال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے وزارت نیشنل ہیلتھ کو ہدایت کی ہے ہسپتالوں کو ادویات کی سپلائی کیلئے اچھی شہرت کی حامل کمپنیوں کا انتخاب کیا جائے۔ ذیلی کمیٹی کا اجلاس کنوینئر شاہدہ اخترعلی کی سربراہی میں پارلیمنٹ ہاؤس میں منعقد ہوااجلاس میں وزارت نیشنل ہیلتھ کے مالی سال2013/14کے آڈٹ اعتراضات کا جائزہ لیا گیا۔کمیٹی کی کنوینر شاہدہ اختر علی نے کہاکہ یہ امر تشویش ناک ہے کہ مارکیٹ میں غیر معیاری ادویات موجود ہیں اس حوالے سے ڈریپ حکام کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے جس پر وزارت نیشنل ہیلتھ کے حکام نے بتایاکہ غیر معیاری ادویات کے خلاف ڈریپ حکام چھاپتے مارتے ہیں اور بڑی مقدار میں ادویات کو ضبط بھی کیا گیا۔ کمیٹی نے پمز ہسپتال میں موجود موبائل ٹاؤر سے مریضوں پر پڑنے والے مضر اثرات کے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے ہدایت کی کہ یہ دیکھا جائے کہ یہ موبائل ٹاؤر ہسپتال کے وارڈز سے کتنی دوری پر واقع ہیں اور ان کے اثرات مریضوں پر پڑتے ہیں یا نہیں کمیٹی نے اس حوالے سے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی۔

ذیلی کمیٹی

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...