قومی زبان میں ذریعہ تعلیم حکومت کی سنجیدگی کا ثبوت ہے،عزیز ظفر آزاد

  قومی زبان میں ذریعہ تعلیم حکومت کی سنجیدگی کا ثبوت ہے،عزیز ظفر آزاد

  



لاہور (سٹی رپورٹر) پاکستان قومی زبان تحری کے صدر عزیز ظفر آزاد نے ایک بیان میں کہا ہے کہ پنجاب حکومت کا پرائمری سطح پر اردو میڈیم ذریعہ تعلیم بحال کرنا اور نصابی کتب کی قومی زبان میں فراہمی لائق تحسین عمل ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت پنجاب اور وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار کو قومی جذبے سے سرشار اس قومی کار عظیم پر خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ دیگر صوبوں کو بھی پنجاب کابینہ کی پیروی کرتے ہوئے قومی یک جہتی کا ثبوت دیتے ہوئے ایک زبان ایک نصاب لاگو کرنا چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ آئین پاکستان اور فرمان قائد پر عمل کر کے حکومت نے قومی معاملات میں سنجیدگی کا ثبوت دیا ہے جو تکمیل پاکستان کی جانب سفر کا آغاز ہے۔ انہوں نے کہا پنجاب کابینہ کے اس مستحسن فیصلے پر پاکستان قومی زبان تحریک کا خصوصی وفد وزیراعلی پنجاب سے ملاقات کر کے ثانوی اور اعلی تعلیم کو قومی زبان میں ڈھالنے کے علاوہ دارالترجمہ کے قیام کے لئے بھی سفارشات پیش کرے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ رواں برس قومی تعلیمی پالیسی میں قومی زبان میں نصابی تعلیم کے لئے پاکستان قومی زبان تحریک کی مہم نے ملک بھر میں عدالت عظمی کے فیصلے پر عملدرآمد کے لئے خاطرخواہ نتائج حاصل کئے ہیں۔سرکاری و نیم سرکاری اداروں میں بھی قومی زبان میں مراسلہ نویسی کا آغاز ہو چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ مقابلے کے امتحان قومی زبان میں لینے کے لئے عدالت کا فیصلہ موجود ہے جس پر عملدرآمد میں تاخیر کی جارہی ہے جوآئین پاکستان اور فرمان قائد سے روگردانی ہے۔انہوں نے وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا کہ قومی سطح پر قائم نفاذِ قومی زبان کمیٹی کو فعال کیا جائے تاکہ آئین پاکستان کی شق۲۵۱ پر مکمل عملدرآمد ہو سکے۔

عزیز ظفر

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...