صوبائی حکومت میں اختلافات کھل کر سامنے آنے کے بعد نئی حکومت کیلئے جوڑ توڑ شروع، سیاسی میدان سے خبرآگئی

صوبائی حکومت میں اختلافات کھل کر سامنے آنے کے بعد نئی حکومت کیلئے جوڑ توڑ ...
صوبائی حکومت میں اختلافات کھل کر سامنے آنے کے بعد نئی حکومت کیلئے جوڑ توڑ شروع، سیاسی میدان سے خبرآگئی

  



کوئٹہ(ویب ڈیسک)  صوبے کی حکمران جماعت بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) میں اختلافات کھل کر سامنے آنے کے بعد نئی حکومت بنانے کے لیے جوڑ توڑ کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔

ذرائع کے مطابق جمعیت علمائے اسلام ف (جے یو آئی ف) اور بلوچستان نیشنل پارٹی مینگل نے بلوچستان کے قائم مقام گورنرعبدالقدوس بزنجو کے ساتھ بیک ڈور رابطے شروع کردیے ہیں،دونوں جماعتوں کے رہنماؤں کا جلد عبدالقدوس بزنجو کے ساتھ باضابطہ ملاقات کا امکان ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ جے یو آئی ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے پارٹی رہنما عبدالغفور حیدری کو قدوس بزنجو کے ساتھ رابطہ کرنے کی ہدایت کردی ہے۔خیال رہے کہ عبدالقدوس بزنجو گزشتہ اسمبلی میں پاکستان مسلم لیگ نواز کی حکومت کی ان ہاؤس تبدیلی کے بعد وزیر اعلیٰ بنے تھے۔

مزید : علاقائی /بلوچستان /کوئٹہ