دوستوں کو بچانے کیلئے نیب آرڈیننس کاسہارالیاگیا،رہبرکمیٹی

دوستوں کو بچانے کیلئے نیب آرڈیننس کاسہارالیاگیا،رہبرکمیٹی
دوستوں کو بچانے کیلئے نیب آرڈیننس کاسہارالیاگیا،رہبرکمیٹی

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اپوزیشن کی رہبر کمیٹی نے کہا ہے کہ حکومت پر تنقید کرنے والوںکو گرفتار کرلیاجاتاہے۔جو رہنما آزادی سے بات کرتے ہیں ن کی فائلز نیب یا ایف آئی اے کے پاس ہیں۔

ایف ائی اے میں واجد ضیا کو گرفتاریوں کیلئے مقرر کیاگیا۔دوستوں کو بچانے کیلئے نیب آرڈیننس کا سہارالیاگیا۔حکومت اداروں کے درمیان لڑائی کروائے یہ ملک کیلئے نیک شگون نہیں ہے۔

کمیٹی کے سربراہ اکرم درانی نے کہا اتفاق رائے سے آزادی مارچ کیاگیاجسے تمام اپوزیشن رہنماوں کی حمایت حاصل تھی۔انہوں نے کہاموجودہ حکومت بولنے کی سزادے رہی ہے۔ احسن اقبال کو حکومت مخالف بولنے کی سزا دی گئی۔احسن اقبال پر ڈھائی ارب کے منصوبے میں 6 ارب کرپشن کا الزام ہے۔شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری بھی شرمناک ہے،شاہد خاقان کو سزائے موت والے گھاٹ میں رکھا گیاہے۔بلاول بھٹو کو بھی نوٹس بھیجا گیا۔اکرم درانی نے کہااس حکومت میں بجلی ہے نہ گیس ،ٹھنڈ ہی ٹھنڈ ہے ،

نیب آرڈیننس پر بات چیت کرتے ہوئے اکرم درانی نے کہا کہ وزیراعظم نے دوستوں کیلئے نیب آ رڈیننس پاس کیا، حکومت کو کہنا چاہتے ہیں کہ اپوزیشن میں سب پرانی جماعتیں ہیں وہ ہر قسم کا رویہ سہہ لیں گی،حکومتی جماعت نئی ہے۔اس کیلئے مشکل ہوگی،اس لئے اتنا کرو جتنا سہہ سکو۔انہوں نے کہا سپریم کورٹ سے استدعا کرتے ہیں کہ بی آرٹی پر سٹے آرڈر منسوخ کیاجائے۔درانی نے کہا بلین ٹری اور مالم جبہ پر توکوئی سٹے نہیںہے۔انہوں نے کہا کہ ترکی اور ملائیشیا نے مقبوضہ کشمیر پر ہمارے موقف کو سراہا ہے،ہماری حمایت کی ہے ہم ان کا شکریہ اداکرتے ہیں۔

مزید : اہم خبریں /قومی


loading...