زرعی یونیورسٹی ملتان میں دوروزہ ڈائس بزنس آئیڈیاز مقابلے

زرعی یونیورسٹی ملتان میں دوروزہ ڈائس بزنس آئیڈیاز مقابلے

  

ملتان(سپیشل رپورٹر) ایم این ایس زرعی یونیورسٹی میں دو روزہ ڈائس بزنس آئیڈیاز مقابلہ جات کا انعقاد کیا گیا۔ جسکی صدارت وفاقی وزیر نیشنل فوڈ اینڈ سکیورٹی سید فخر امام شاہ نے کی۔ انہوں نے اپنے افتتاحی خطاب کے دوران زرعی جامعہ ملتان اور ڈائس انتظامیہ کی طرف سے اس پروگرام کے انعقاد پر مبارکباد دی مزید کہا کہ آج زرعی جامعہ میں 50سے زائد ملکی یونیورسٹیز کے طلبا و طالبات کو بزنس آئیدیاز دینے پر دِلی خوشی ہو رہی ہے۔حکومت کی ترجیحات میں زراعت (بقیہ نمبر14صفحہ6پر)

سر فہرست ہے اور وزیراعظم زراعت کی ترقی کے لئے ہر ممکن اقدام اٹھانے کے لئے ہمہ وقت کوشاں ہیں۔اور مختلف  زرعی مداخل میں سبسڈی دی جارہی ہے۔زرعی اجناس کی سپورٹ پرائس مقرر کی گئی ہے تاکہ کسان کو اسکی پیداوار کا بہتر معاوضہ مل سکے۔اب وقت کی اشد ضرورت ہے کہ لوگوں کو زراعت اور زراعت کے متعلقہ جدید کاروبار کی رہنمائی کی جائے تاکہ کسان ملکی ترقی میں خاطر خواہ حصہ لے سکے۔ اس مقصد کے لئے میں سمجھتا ہوں کہ جامعہ زرعیہ ملتان پورے ملک کی جامعات کو پلیٹ فارم مہیا کر کے مددگار ثابت ہو رہی ہے۔ رئیس جامعہ پروفیسر ڈاکٹر آصف علی نے خطاب کرتے ہوئے تمام ملکی یونیورسٹیز اور پرائیویٹ نجی شراکت داروں کا شکریہ ادا کیا۔اِن کا مزید کہنا تھا کہ کرونا کے بعد سابقہ سالوں کی طرح اس سال اللہ کے فضل و کرم سے دوبارہ اس میگا ایونٹ کو کروانے میں کامیاب ہوئے ہیں اور اس پلیٹ فارم کے زریعے ہم نے جامعات کو اور انڈسٹری کو اکٹھا کیا ہے تاکہ وہ ایک دوسرے کے آئیڈیاز سے استفادہ کرتے ہوئے ملکی معاشی مسائل کے حل میں اپنا اپنا کردار ادا کر سکیں۔خورشید قریشی CEO DICE نے ایم این ایس زرعی یونیورسٹی ملتان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ اب دور جدید میں برینڈ انوویشن لانے کی اشد ضرورت ہے جو کہ میں سمجھتا ہوں کہ اسکے لئے جامعات اور پراییٹ پارٹنرزہی بہتر پلیٹ فارم ہیں۔ آخر میں سید فخر امام نے مہمانوں کے ہمراہ مختلف جامعات اور پراییٹ اداروں کے اسٹالز کا بھی دورہ کیا اور ان کی کاوششوں کو بے حد سراہا۔ اس موقع پر آصف مجید، ڈاکٹر شفیق پتافی، میجر طارق، خالد کھوکھر، آصف ٹیپو، ڈاکٹر شفقت سعید، ڈاکٹر عرفان احمد بیگ، ڈاکٹر آصف رضا، ڈاکٹر عمر فاروق، ڈاکٹر مبشر مہدی سمیت دیگر فیکلٹی و سٹاف، انڈسٹری،کسانوں اور طلبا طالبات کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

فخر امام

مزید :

ملتان صفحہ آخر -