قومی اسمبلی: حکومت پھر کورم پورا کرنے میں ناکام، 3سال میں ادویات کی قیمتیں بڑھانے کا اعتراف   

قومی اسمبلی: حکومت پھر کورم پورا کرنے میں ناکام، 3سال میں ادویات کی قیمتیں ...

  

اسلام آباد(آئی این پی) قومی اسمبلی میں حکومت نے گزشتہ 3سال کے دوران ادویات کی قیمتوں میں اضافے کا اعتراف کرلیا، حکومت کی جانب سے تحریری جوابات میں ایوا ن کو آگاہ کیاگیاکہ2018ء میں ضروری ادویات کی قیمتوں میں 2.744فیصد جبکہ 2019ء میں 7 اور 2020ء میں 5.13فیصد اضافہ کیا گیا، اگست 2018تا 30نومبر 2021ء کے دوران ریلوے نیٹ ورک پر کل 442حادثات ہوئے، نتیجے میں 282قیمتی جانوں کا ضیاع جبکہ416افراد زخمی ہوئے، گزشتہ 3سال کے دوران وزارت ریلو ے و پاکستان ریلوے کی مختلف سکیل اور کیٹیگریز کی 10494اسامیاں مشتہر کی گئیں جبکہ اسوقت 30ہزار807اسامیاں خالی ہیں،ہم سالانہ قریباً36ملین ٹن غذا ضائع کرتے ہیں جس میں شا د یوں، پارٹیوں اور ہوٹلوں کا حصہ 40فیصد ہے۔ دوسری جانب حکومت قومی اسمبلی میں ایک بار پھر کورم پورا کرنے میں ناکام رہی جس کے باعث اجلاس کا ایجنڈا نمٹایا نہ جا سکا اور اجلاس کی کاروائی کل بدھ تک ملتوی کر دی گئی۔پیر کو قومی اسمبلی کا اجلاس اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی صدارت میں شروع ہوا، اجلاس کے دوران سپیکر نے وقفہ سوالات شروع ہی کیا تھا کہ مسلم لیگ(ن) کے رکن قومی اسمبلی شیخ فیاض الدین نے کورم کی نشاندہی کر دی، گنتی کرانے کے بعد سپیکر نے کورم پورا ہونے تک اجلاس کی کاروائی ملتوی کردی،بعد ازاں پینل آف چیئرکے رکن امجد علی خان نے دورباہ گنتی کرائی اور کورم پورا نہ ہونے پر اجلاس کی کاروائی بدھ تک ملتوی کردی۔ رکن اسمبلی سید ابرار شاہ کے سوال کے تحریری جواب میں  وزارت نیشنل فوڈ سکیورٹی نے ایوان کو آگاہ کیا ملک بھر بالخصوص ہوٹلوں، پارٹیوں اور تقریبات میں استعمال کی سطح پر ہم سالانہ قریبا36ملین ٹن غذا ضائع کرتے ہیں، رکن اسمبلی فہیم خان کے سوال کے تحریری جواب میں وزارت ریلوے نے ایوان کو آگاہ کیاکہ گزشتہ تین سالوں کے دوران وزارت ریلوے اور پاکستان ریلوے کی مختلف سکیل اور کیٹیگریز کی 10494اسامیاں مشتہر کی گئیں جبکہ اسوقت30807اسامیاں خالی پڑی ہیں۔رکن اسمبلی سعد وسیم کے سوال کے تحریری جواب میں وزارت صحت نے ایوان کو بتایا یہ بات در ست ہے کہ گزشتہ تین سالوں کے دوران ادویات کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے، 2018میں ضروری ادویات کی قیمتوں میں 2.744فیصد اضافہ کیا گیا جبکہ 2019میں سات فیصد اور 2020میں 5.13فیصد اضافہ کیا گیا، ضروری اور کم قیمت والی ادویات کے علاوہ ادویات کی قیمتوں میں 2018میں 3.92فیصد اضافہ کیا گیا جبکہ 2019 میں دس فیصد اور 2020میں 7.34فیصد اضافہ کیا گیا۔ رکن اسمبلی نزہت پٹھان کے سوال کے تحریری جواب میں وزارت ریلوے نے ایوان کو بتایاکہ اگست 2018تا 30نومبر 2021کے دوران ریلوے نیٹ ورک پر کل 442 حادثات ہوئے، حادثات کے نتیجے میں 282 قیمتی جانوں کا ضیاع ہوا جبکہ416افراد زخمی ہوئے۔وقفہ سوالات کے دوران وزارت صحت کی جانب سے بتایا گیا کورونا سے بچاؤ کیلئے 7 ویکسین پاکستان میں لگائی گئیں، سائنو فارم، سائنو ویک، فائزر، ایسٹرازینیکا اور موڈرنا سمیت دیگر کی 14 کروڑ 40 لاکھ کے قریب پاکستانیوں کو پہلی خوراک لگ چکی، اب تک مکمل ویکسین کرانے والوں کی کل تعداد 6 کروڑ 25 لاکھ کے سے زائد ہے۔تاہم اجلاس میں حکومت کورم پورا کرنے میں ناکام رہنے پر عوامی اہمیت سے متعلق اہم سوالات اور توجہ دلاؤ نوٹسز بھی کورم کی نذر ہوگئے، ارکان کا اجلاس ملتوی کرکے پون گھنٹہ انتظار بھی بے سود رہا۔ 

قومی اسمبلی

مزید :

صفحہ آخر -