مشعال ملک کا کشمیریوں کی نسل کشی پر او آئی سی اجلاس بلانے کا مطالبہ

  مشعال ملک کا کشمیریوں کی نسل کشی پر او آئی سی اجلاس بلانے کا مطالبہ

  

اسلام آباد (آئی این پی)چیئرپرسن پیس اینڈ کلچر آرگنائزیشن مشعا ل یاسین ملک نے کہا ہے کہ بھارت کے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیرمیں نہتے اور معصوم کشمیریوں کی جاری نسل کشی پراو آئی سی وزرائے خارجہ کا اجلاس بلایا جائے۔بھارتی جیل میں بند کشمیری حریت رہنما محمد یاسین ملک کی اہلیہ چیرمین پیس اینڈ کلچر مشعال حسین ملک نے اپنے جاری کردہ بیان میں کہا بھارتی فاشسٹ حکومت کی ریاستی دہشت گردی مقبوضہ کشمیر میں مزید تیز ہوگئی یے کشمیریوں کو جعلی مقابلوں اور تلاشی اور محاصرے کی کارروائیوں میں قتل کیا جارہا ہے۔ مسلمان اتحاد کا مظاہرہ کریں، اور خوبصورت وادی میں کشمیریوں کی نسل کشی پر افغانستان جیسا سربراہی اجلاس بلایا جائے۔ دنیا خصوصاً مسلم ممالک کی خاموشی اور بے عملی نے ہندوتوا حکومت کو اپنے نسل کشی کے مشن کو مزید تیز کرنے کا حوصلہ دیا۔ تاہم مسلم ممالک کی اکثریت کشمیریوں کے قتل عام کی صرف مذمت تک نہیں کر سکی۔انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ بھارت کا بلا روک ٹوک جبر اور طاقت کا استعمال ان بہادر کشمیریوں کے عزم کو توڑ سکتا ہے جو وادی میں بھارت کی ریاستی دہشت گردی کیخلاف پر عزم ہیں۔مشعال ملک نے عالمی طاقتوں اور اقوام متحدہ کے اداروں سے مطالبہ کیا کہ وہ نہ صرف کشمیریوں کی نسل کشی روکنے کیلئے بھارتی حکومت پر دباؤ ڈالیں بلکہ کشمیری عوام کی امنگوں اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق تنازعہ کشمیر کے حل کو یقینی بنائیں۔

مشعال ملک

مزید :

علاقائی -