پشاور،تجاوزات قائم کرنے پر 5500 افراد پر جرمانے عائد

پشاور،تجاوزات قائم کرنے پر 5500 افراد پر جرمانے عائد

  

پشاور(کرائم رپورٹر) سٹی ٹریفک پولیس پشاور نے گزشتہ پانچ ماہ کے دوران تجاوزات مافیا کیخلاف کارروائیوں میں 5500 افراد جبکہ نو پارکنگ زون کی خلاف ورزیوں پر 2410 موٹر سائیکل مالکان کے خلاف کارروائی عمل میں لائی ہے۔ تفصیلات کے مطابق آئی جی پولیس معظم جاہ انصاری کے وژن کے مطابق سی سی پی او پشاور عباس احسن کی ہدایت پر چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت کی نگرانی میں سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی جانب سے تجاوزات مافیا کو رضا کارانہ طور پر تجاوزات ختم کرنے اور نو پارکنگ زون کی خلاف ورزی نہ کرنے بارے آگاہی کا سلسلہ جاری ہے جبکہ اس سلسلے میں خلاف ورزی کرنیوالوں کے خلاف شہر کے تمام سیکٹروں میں کارروائیاں کی گئی ہیں جس کے تحت تجاوزات قائم کرنے پر 5500 افراد کے خلاف کارروائی عمل میں لائی گئی ہے اسی طرح کینٹ سیکٹر میں بلور پلازے کے سامنے‘ خوشحال بازار اور نمک منڈی میں نو پارکنگ زون میں موٹر سائیکلیں کھڑی کرنے پر 2410 موٹر سائیکل مالکان کے خلاف کارروائی عمل میں لائی گئی ہے۔ چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے کہا ہے کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور قانونی تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے تجاوزات مافیا کو پہلے نوٹسز جاری کرتی ہے جبکہ اس کے بعد آپریشن کرکے تجاوزات قائم کرنے کے مرتکب افراد کو گرفتار کیا جاتا ہے. انہوں نے کہا کہ تجاوزات مافیا شہر کی خوبصورتی کا خاص خیال رکھتے ہوئے اپنے حدود سے تجاوز نہ کریں اور شہریوں کیلئے کسی قسم کے مشکلات پیدا کرنے سے گریز کریں۔ انہوں نے مزید کہا کہ تجاوزات کی وجہ سے شہر کی خوبصورتی متاثر ہوتی ہے جو کسی صورت قابل قبول نہیں۔ چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے مزید کہا کہ تجاوزات قائم کرنے کے مرتکب افراد کے خلاف سخت سے سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائیگی اور کسی کے ساتھ کوئی نرمی نہیں برتی جائیگی۔انہوں نے کہا کہ شہری نو پارکنگ زون کی خلاف ورزی نہ کریں جس سے ٹریفک نظام میں خلل سمیت شہریوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے جبکہ مرتکب افراد کسی رعایت کے مستحق نہیں ہیں۔ انہوں نے ٹریفک حکام کو ہدایت کی کہ وہ ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنیوالوں کیخلاف قانون کے مطابق سخت کارروائی عمل میں لائیں۔

مزید :

صفحہ آخر -