پریذائیڈنگ افسران کا اغوا عام بات نہیں ، چیف الیکشن کمشنر کاڈی پی او بنوں کی رپورٹ پر عدم اطمینان کا اظہار

پریذائیڈنگ افسران کا اغوا عام بات نہیں ، چیف الیکشن کمشنر کاڈی پی او بنوں کی ...
پریذائیڈنگ افسران کا اغوا عام بات نہیں ، چیف الیکشن کمشنر کاڈی پی او بنوں کی رپورٹ پر عدم اطمینان کا اظہار

  

اسلام آباد  ( ڈیلی پاکستان آن لائن)  بنوں کی تحصیل بکا خیل میں قبل از انتخابات دھاندلی کیس کی سماعت ہوئی ، چیف الیکشن کمشنر نے ڈی پی او بنوں کی رپورٹ پر عدم اعتماد کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ پریذائیڈنگ افسران کا اغواء عام بات نہیں ہے ۔

دوران سماعت چیف الیکشن کمشنر نے ڈی پی او بنوں سے استفسار کیا کہ  آپ نے معاملے میں اب تک کیا کارروائی کی ہے ، ڈی پی او بنوں نے بتایا کہ ہم نے  11 افراد کو گرفتار کرلیا ہے ۔ چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ تحقیقات کا حصہ صرف گرفتاری نہیں ہے ، ڈی پی او بنوں مکمل رپورٹ دیں ، یہ رپورٹ صرف گرفتاری کے گرد گھوم رہی ہے ،  سپیشل برانچ کی کیا انٹیلی جنس رپورٹس ہے ؟،  آپ لوکیشن معلوم کریں ، یہ بنیادی رپورٹ ہے، ایسے کام نہیں چلے گا ۔

دوران سماعت چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ  پریذائیڈنگ افسران کا اغواء معمولی بات نہیں ، ڈی پی او بنوں تفصیلی رپورٹ لائیں ورنہ کارروائی کر دیں گے ، اگر آپ سے کام نہیں ہوتا تو کام کسی اور کے سپرد کر دیں ، ہم سرکاری افسران کے خلاف کارروائی کریں گے ،  آئی جی خیبر پختونخوا اس کیس میں ذاتی دلچسپی لیں ، ڈی پی او کی آئندہ رپورٹ ٹھیک نہ ہوئی تو آئی جی پولیس کو بلائیں گے۔

الیکشن کمیشن نے سپیشل سیکرٹری کو 4 جنوری سے قبل انکوائری رپورٹ مکمل کرنے کی ہدایت دے دی۔

مزید :

قومی -