ریکوڈک  منصوبے کے حوالے سے وزیراعلیٰ بلوچستان نے بڑا اعلان کردیا 

ریکوڈک  منصوبے کے حوالے سے وزیراعلیٰ بلوچستان نے بڑا اعلان کردیا 
ریکوڈک  منصوبے کے حوالے سے وزیراعلیٰ بلوچستان نے بڑا اعلان کردیا 
سورس: File Photo

  

کوئٹہ( ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیراعلیٰ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو نے کہا ہے کہ ریکوڈک کے حوالے سے کوئی چیز خفیہ نہیں رکھی، ہماری کوشش ہے کہ بلوچستان کو ریکوڈک کے حوالے سے زیادہ سے زیادہ شیئر ملے ،ڈاکٹروں کے رویے پر افسوس ہے، میں نے خود ان سے ملاقات کرکے ان کے مطالبات تسلیم کیے تھے لیکن وہ بضد ہیں کہ ایک مہینے سے زائد ہسپتالوں کو تالے لگاکر احتجاج کررہے ہیں۔

 سرکلر روڈ پارکنگ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئےمیر عبدالقدوس بزنجو  نے کہا کہ   بلوچستان کے عوام مطمئن رہیں، ریکوڈک کے حوالے سے کوئی خفیہ معاہدہ نہیں کررہے،ریکوڈک کے حوالے سے کوئی چیز خفیہ نہیں رکھی بلکہ بلوچستان کے منتخب اراکین اسمبلی کو ان کیمرہ بریفنگ دی جنہوں نے حکومت بلوچستان کی اس کاوش کو سراہا، بند کمروں کی بجائے صوبے کے منتخب نمائندوں سے مشورہ کیا، بلوچستان کے منتخب اراکین اسمبلی جن میں حکومتی اور اپوزیشن اراکین شامل تھے انہیں ان کیمرہ بریفنگ دی اوران سب کو مطمئن کیا گیا, ڈاکٹر عبدالمالک بلوچ کو بھی بلوچستان اسمبلی کے ان کیمرہ اجلاس میں شرکت کی دعوت دی تھی لیکن افسوس وہ شریک نہیں ہوئے, ریکوڈک منصوبے میں بلوچستان کے 15ہزار بے روزگار نوجوانوں کو روزگار کے مواقع ملے گے۔

 وزیراعلیٰ بلوچستان  نےکہا  کہ  ہماری کوشش ہے کہ ہم کوئٹہ میں ٹریفک کے مسئلے کو حل کریں ،اس حوالے سے میزان چوک پر بھی پارکنگ پلازہ بنائینگے ،میں نے چیف سیکرٹری ہدایت کی ہے کہ وہ اس حوالے سے مجھے رپورٹ کرے تاکہ اس پلازے پر بھی کام شروع کیا جاسکے، سرکلر روڈ پارکنگ میں چھ سو گاڑیوں کی گنجائش ہے ،جب تک اس کا ٹینڈر نہیں ہوتا،اس وقت تک عوام اپنی گاڑیاں مفت پارک کرے ،ان سے کوئی چارجز نہیں لیا جائے گا،اس پارکنگ سے قبل شہری مجبوراً جناح روڈ، لیاقت بازار، قندھاری بازار میں اپنی گاڑیاں سڑک پر پارک کرتے تھے، جس کی وجہ سے ٹریفک جام کا مسئلہ رہتا تھا ،اس پارکنگ پلازے کی تعمیر سے جناح روڈ، لیاقت بازار، قندھاری بازار سرکلر روڈسورج گنج بازار سمیت دیگر شاہراوں کے تاجروں اور عوام کو پارکنگ کی سہولت میسر ہوگی ۔

ڈاکٹروں کی ہڑتال کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں وزیراعلیٰ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو نے کہا کہ میں نے خودڈاکٹروں کو بلایا ،ان سے مذاکرات کیے ،ان کے تمام مطالبات مان لیے لیکن وہ بضد تھے کہ ہم سڑکوں پر احتجاج کرینگے ،جس سے بلوچستان کے عوام کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا، صوبائی وزیر صحت سمیت دیگر وزراءبھی ان سے بات چیت کررہے ہیں۔

مزید :

علاقائی -بلوچستان -کوئٹہ -