شیخ رشید کی کتاب کا انگریزی ایڈیشن شائع ،تقریب رونمائی کب ہو گی؟جانئے

شیخ رشید کی کتاب کا انگریزی ایڈیشن شائع ،تقریب رونمائی کب ہو گی؟جانئے
شیخ رشید کی کتاب کا انگریزی ایڈیشن شائع ،تقریب رونمائی کب ہو گی؟جانئے
سورس: File Photo

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیرداخلہ وسربراہ عوامی مسلم لیگ شیخ رشید احمد کی تیسری کتاب ''لال حویلی سے اقوام متحدہ تک'' کا انگریزی ایڈیشن شائع ہوچکا ہے جس کی تقریب رونمائی پانچ  جنوری 2022 بروز بدھ ، سہ پہر تین بجے فائیوسٹار ہوٹل اسلام آباد میں منعقد ہوگی۔

تقریب رونمائی میں مختلف ممالک کے سفیر، وفاقی وزرا، سنیئر صحافی اورمصنف (شیخ رشیداحمد) کے قریبی رفقا شرکت کریں گے۔ یہ کتاب ''دنیاپبلشرز''کی دوسری کاوش ہے۔ کتاب کے پبلشردنیا میڈیا گروپ کے چیئرمین میاں عامر محمود ہیں جبکہ ترتیب وتدوین کے فرائض سنیئرصحافی وکالم نگار زاہداعوان نے سرانجام دئیے۔ کتاب کی طباعت میں پروف ریڈنگ، ڈیزائننگ، کمپوزنگ،سرورق، کاغذ کے انتخاب سے لے کر جلد بندی تک عالمی معیار برقرار رکھاگیاہے۔اس سے قبل شیخ رشیداحمد کی کتابیں ''فرزندِپاکستان''  ''میدانِ خطابت کاشہنشاہ ''کے علاوہ ''لال حویلی سے اقوام متحدہ تک'' کے تین ایڈیشن شائع ہوچکے ہیں۔

شیخ رشید احمد نے اپنی پچاس سالہ سیاسی جدوجہد پرمشتمل جامع کتاب ''لال حویلی سے اقوامِ متحدہ تک'' تحریر کی جس کے انگریزی ترجمہ پرمشتمل ایڈیشن '' LAL HAVELI TO UNITED NATIONS'' بھی شائع ہوچکا ہے، یہ کتاب شیخ رشیداحمد کی پچاس سال سے زائد سیاسی جدوجہد کے اہم ترین حالات وواقعات پر مبنی ایک اہم تاریخی دستاویز ہے ، اس کتاب میں ان کے خاندان، بچپن، لڑکپن، زمانہ طالب علمی، سیاست کے آغاز، مشکلات، مسائل، جدوجہدسے لے کر سیاسی انتقام پرمبنی مقدمات اورجیلوں میں بے گناہ کاٹی گئی قید وسزاوں سمیت زندگی کے ہرپہلو کو خوبصورت انداز میں بیان کیاگیاہے۔

کتاب میں  شیخ رشید نے اپنی والدہ مرحومہ خورشیدبیگم کی محبت، ان کے انتقال اوراپنی زندگی کے اہم نشیب وفراز کاذکر کیاہے ، انہوں نے اہم واقعات کو انتہائی سادہ اورحقیقی انداز میں بیان کیاہے اور بامحاورہ ترجمہ بھی آسان انگریزی میں کیاگیاہے تا کہ قاری کتاب کوشروع سے آخر تک پڑھے بغیر نہ رہ سکے ، کتاب میں کئی اہم لیڈروں کے سیاسی عروج وزوال کی داستانیں بھی ملتی ہیں اوربہت سے اہم انکشافات بھی رقم ہیں۔ شیخ رشیدنے کتاب میں کئی سیاسی مخالفین کا ذکر بھی اتنی ایمانداری سے کیاہے جس کی مثال ماضی میں نہیں ملتی کیونکہ اکثر لوگ حالات وواقعات کو اپنی مرضی وخواہش کے مطابق توڑ موڑ کر پیش کرتے ہیں لیکن شیخ رشیداحمد نے اپنی خودنوشت میں تمام واقعات کوان کی روح کے مطابق بیان کیاہے جس سے اس کتاب اہمیت مزید بڑھ گئی ہے۔کتاب میں واقعات کو افسانوی انداز دینے کی بجائے اس حقیقی ترتیب سے بیان کیاہے کہ قاری کویوں معلوم ہوتاہے جیسے وہ کوئی فلم یا اپنی آنکھوں سے واقعہ دیکھ رہاہو۔کتاب کی قیمت صرف پندرہ سوروپے رکھی گئی ہے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -