جنوبی افریقہ نے کالی آندھی کے چھکے چھڑا دیئے ،257رنز سے کامیاب

جنوبی افریقہ نے کالی آندھی کے چھکے چھڑا دیئے ،257رنز سے کامیاب

 سڈنی ( نیٹ نیوز) ڈی ویلئیرزاور عمران طاہر نے کالی آندھی چلنے ہی نہ دی جنوبی افریقہ نے ویسٹ انڈیز کیخلاف باآسانی257رنز سے کامیابی حاصل کرلی، جنوبی افریقہ نے مقررہ 50 اوورز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 408 رنز بنائے،ون ڈے کرکٹ میں آسٹریلوی سرزمین پر کسی بھی ٹیم کا یہ سب سے زیادہ سکور، جنوبی افریقہ نے ٹاس جیت کر دھواں دھار انداز میں بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 408 رنز بنائے، کپتان اے بی ڈیویلیرز نے تباہ کن بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور ویسٹ انڈیز کے بولروں کو بے سود کرتے گراؤنڈ کے چاروں جانب چھکے چوکوں کی برسات کردی 162 رنز کی شاندار اننگز کے ساتھ ناٹ آؤٹ رہے۔جنوبی افریقا کے اس پہاڑ جیسے ہدف میں ہاشم آملہ، فیف ڈوپلیسی اور ریلے روسوو نے بھی اہم کردار ادا کیا اور بالترتیب 65، 62 اور 61 رنز کی ذمہ دارانہ اننگز کھیلی۔ ویسٹ انڈیز کی جانب سے سب سے زیادہ رنز دینے والے جیسن ہولڈر تھے جنہوں نے 10 اوورز میں 104 رنز دے کر ایک وکٹ حاصل کی جب کہ آندرے رسل اور کرس گیل نے 2،2 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔جواب میں ویسٹ انڈیز کی پوری ٹیم 33.1اوورزمیں 151رنز بناکر ڈھیر ہوگئی۔ایک بڑے ہدف کے تعاقب میں ویسٹ انڈیز کا آغاز اچھا نہ تھا اور اننگز کے دوسرے ہی اوور میں گذشتہ میچ میں ڈبل سنچری بنانے والے کرس گیل صرف تین رنز بنا کر ایبٹ کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔ایبٹ نے ہی اپنے اگلے اوور میں سیموئلز کو بھی آؤٹ کیا جو کوئی رن نہ بنا سکے۔اس کے بعد 53 کے مجموعی سکور پر ویسٹ انڈیز کو یکے بعد دیگرے تین وکٹوں کا نقصان اٹھانا پڑا۔پہلے کارٹر کو دس رنز پر مورکل نے آؤٹ کیا پھر عمران طاہر نے سمتھ اور سمنز کو ایک ہی اوور میں پویلین کی راہ دکھائی۔ویسٹ انڈیز کے آؤٹ ہونے والے چھٹے کھلاڑی سیمی تھے جو پانچ رن بنا کر عمران طاہر کی گیند پر ہی سٹمپ ہوئے۔63 کے مجموعی سکور پر ویسٹ انڈیز کی ساتویں وکٹ بھی گر گئی جب رسل آرنلڈ صفر پر آؤٹ ہوئے۔47 گیندوں میں 22 رنز بنانے والے دنیش رام دین کو آؤٹ کر کے عمران طاہر نے انفرادی طور پر پانچویں اور جنوبی افریقہ کے لیے آٹھویں وکٹ لی۔6ویسٹ انڈین بلے باز ڈبل فگرمیں داخل نہ ہوسکے۔جیسن ہولڈرنے سب سے زیادہ 56رنز بنائے۔جنوبی افریقہ کی جانب سے عمران طاہرنے 5جبکہ کائل ایبٹ اور مورنے مورکل نے ددووکٹیں حاصل کیں۔جنوبی افریقی کپتان اے بی ڈی ویلئیرز کو مین آف دی میچ قراردیا گیا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی