عالمی تنظیم اہلسنت نے پیر افضل قادری کی بنیادی رکنیت خارج کر دی

عالمی تنظیم اہلسنت نے پیر افضل قادری کی بنیادی رکنیت خارج کر دی

لاہور( نمائندہ خصوصی)عالمی تنظیم اہلسنّت کی مرکزی مجلس عاملہ نے پیرافضل قادری کی بنیادی رُکنیت خارج کردی۔تنظیم کے سیکرٹری جنرل صاحبزادہ فاروق الحسن عثمانی کے مطابق پیرافضل قادری پرڈسپلن کی خلاف ورزی،اختیارارت سے تجاوزکرنے اور کرپشن جیسے سنگین الزامات تھے۔عالمی تنظیم اہلسنّت کی مرکزی مجلس عاملہ نے پیرافضل قادری سے الزمات سے متعلق وضاحت طلب کی تو انہوں نے ایک خودساختہ نئی جماعت سُنی مجلس عمل بنانے کااعلان کردیا۔

اس پرتنظیم کی مجلس عاملہ نے دستورکے مطابق گزشتہ روز جامعہ رحمانیہ رضویہ میں مشاورتی اجلاس طلب کیااورمعاملات کے تفصیلی جائزے کے بعدپیرافضل قادری کی بنیادی رُکنیت خارج کرنے اورتین دن کے اندرنئے صدرکی تقرری کااعلان کردیاجبکہ تنظیمی ضابطے کی خلاف ورزی پرمرکزی ناظم اعلیٰ ضیاء اللہ قادری اورصوبائی صدرسیدشاہدحسین گردیزی کو بھی ٹوٹس جاری کردے گئے ہیں۔

عالمی تنظیم اہلسنّت کے دستورکے مطابق نئے صدرکا اعلان اتوارکو مرکزی مجلس عاملہ کے اجلاس میں کیاجائے گا۔ صاحبزادہ فاروق الحسن عثمانی نے مزیدکہاکہ پیرافضل قادری نے ہمیشہ پارٹی مفادکی بجائے ذاتی مفادکو ترجیح دی ہے۔ پیرافضل قادری پارٹی دراصل چوہدری برادران کے پیرول پر کام کرتے تھے۔پیرافضل قادری نے خودساختہ جماعت سُنی مجلس عمل محض اہلسنّت کی قیادت کو تقسیم کرنے کیلئے بنائی۔انہوں نے کہا کہ سُنی مجلس عمل مفادپرستوں کاٹولہ ہے۔عوام اہلسنّت اتحاداہلسنّت کے قاتلوں اور مفادپرستوں کومستردکردے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...