وفاق کی 30مارچ تک پنجاب کا مستقل گورنر تعینات کرنے کی یقین دہانی

وفاق کی 30مارچ تک پنجاب کا مستقل گورنر تعینات کرنے کی یقین دہانی

 لاہور(نامہ نگار خصوصی )وفاقی حکومت نے لاہور ہائیکورٹ میں یقین دہانی کرائی ہے کہ پنجاب میں 30مارچ تک مستقل گورنر تعینات کردیا جائے گا، جس پر عدالت نے کیس کی سماعت 2اپریل تک ملتوی کردی ۔مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے جوڈیشل ایکٹوازم پینل کے چیئرمین اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی طرف سے دائر درخواست پر سماعت کی، اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ 29جنوری سے پنجاب میں مستقل گورنر کا آئینی عہدہ خالی ہے،مستقل گورنر تعینات کرنے کا حکم دیا جائے، وفاقی حکومت کی طرف سے ڈپٹی اٹارنی جنرل نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ وزیر اعظم گورنر پنجاب کی تعیناتی کے حوالے سے مشاورت کر رہے ہیں، گورنر کا عہدہ غیرمعینہ مدت تک خالی نہیں رکھا جائے گا، انہوں نے بتایا کہ آئین کے آرٹیکل 41کے تحت جیسے صدر کے عہدے کی معیاد ختم ہونے کے بعد 60دن کے اندر الیکشن ہوتا ہے،اسی اصول کے تحت گورنر کے عہدے پر بھی تعیناتی کے لئے حکومت کے پاس 30مارچ تک کی مہلت ہے اور 60دن مکمل ہونے تک مستقل گورنر تعینات کر دیا جائے گا جس پر عدالت نے مزید سماعت 2 اپریل تک ملتوی کردی ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4