وزن کم کرنے کے لیے گوروں کا انوکھا حربہ کافی میں مکھن ڈال کر پینے لگے کیونکہ

وزن کم کرنے کے لیے گوروں کا انوکھا حربہ کافی میں مکھن ڈال کر پینے لگے کیونکہ
وزن کم کرنے کے لیے گوروں کا انوکھا حربہ کافی میں مکھن ڈال کر پینے لگے کیونکہ

  

لندن(نیوزڈیسک)آج کل برطانیہ میں کافی میں مکھن شامل کر کے وزن کم کرنے کا جنون اپنے عروج پر ہے۔’بٹر کافی‘ کے نام سے مشہور یہ مشروب اس وقت نہ صرف وزن کم کرنے کے لئے مقبول ہوچکا ہے بلکہ اس کا ذائقہ بھی عام کافی سے مختلف ہے۔یہ کافی لندن کے تمام مشہور سٹورز پر اڑھائی پاﺅنڈ (تقریباًچارسو روپے) میں دستیاب ہے۔اس کافی کو پینے والے اسے ناشتے کے متبادل کے طور پر استعمال کررہے ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ اس سے ان کے جسم کی توانائی ضروریات باآسانی پوری ہو رہی ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ اس ایک کپ کافی میں ناشتے کی تمام توانائی موجود ہے اور وہ دوپہر کے کھانے تک اس ایک کپ سے بہت تازہ دم محسوس کرتے ہیں۔تاہم اس کپ میں کچھ لوگوں کے لئے وہ کشش نہیں یعنی اس کا ذائقہ دوسری کافی سے تیز ہوتا ہے اور پینے والے کو تھوڑی دیر کے لئے قے یا دست کا احساس ہوسکتا ہے۔

ڈائٹ کو ک اور پیپسی کو بہتر سمجھنے والے افراد یہ خبر ضرور پڑھ لیں

یہ آئلی کافی اصل میں ایک امریکی کاروباری ڈیو ایسپرے کی ایجاد سمجھی جاتی ہے جسے تبت میں چائے کے ساتھ مکھن کھلایا گیا تھا اور وہ اسے اتنا پسند آیا کہ اس نے اسے کافی کے ساتھ استعمال کرنے کی روایت متعارف کروائی۔اس کا کہنا ہے کہ چکنائی سے بھرپور اور بہت کم کاربوہائیڈرئیٹ والا یہ مشروب نہ صرف اسے چاک و چوبند رکھتا ہے بلکہ اس سے وزن بھی بہت تیزی سے کم ہوتا ہے۔برطانوی ریسٹورنٹ Planet Organicکے مطابق وہ گذشتہ ایک سال سے یہ کافی بیچ رہے ہیں اور دن بدن اس کی مقبولیت میں اضافہ ہورہا ہے۔Cross Fitکا کہنا ہے کہ جو لوگ بھاری قسم کی ورزش کے عادی ہیں ان کے لئے بھی یہ کافی طاقتور ٹانک سے کم نہیں کیونکہ اس میں ہر قسم کی توانائی پائی جاتی ہے۔

مزید : تعلیم و صحت